غلیل کی مدد سے چوریاں کرنے والا گروہ گرفتارلیکن واردات کیلئے غلیل کا استعمال کیسے کرتا؟

غلیل کی مدد سے چوریاں کرنے والا گروہ گرفتارلیکن واردات کیلئے غلیل کا استعمال ...
غلیل کی مدد سے چوریاں کرنے والا گروہ گرفتارلیکن واردات کیلئے غلیل کا استعمال کیسے کرتا؟
سورس:   Pixabay.com

  

نئی دہلی(آئی این پی)بھارتی ریاست اترپردیش کے علاقے نوئیڈا کی پولیس نے غلیل گینگ کو گرفتار کرلیا، یہ گروہ غلیل کی مدد سے گاڑی کے شیشے توڑ کر قیمتی سامان چوری کرتا تھا۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق نوئیڈا اور دہلی میں غلیل گینگ نے متعدد کارروائیاں کیں اور سینکڑوں لوگوں کی گاڑیوں کے شیشے توڑ کر قیمتی اشیا چرائیں۔تین رکنی گینگ نے حال ہی میں نوئیڈا میں واقع مال مارکیٹ کے قریب کار کا شیشہ غلیل کی مدد سے توڑا اور لیپ ٹاپ سمیت قیمتی سامان چوری کر کے لے گئے تھے۔

رپورٹ کے مطابق نوئیڈا کے علاقے سیکٹر 39 کوتوالی پولیس نے جمعرات کے روز تین ملزمان کو سیکٹر 37 چوراہے کے قریب سے گرفتار کیا جن کی شناخت سنجے عرف مائیکل، امت اور سورج عرف کھوپڑی کے ناموں سے ہوئی۔گرفتار ہونے والے تینوں ملزمان امبیڈکر نگر (دہلی)کے رہائشی ہیں جن کے قبضے سے چار چوری شدہ لیپ ٹاپ، ایک لاکھ 14 ہزار بھارتی و دیگر ملک کی کرنسی، تین قیمتی انگوٹھیاں، پین ڈرائیور، غلیل، دو لیپ ٹاپ بیگ، ایک پرس اور بغیر نمبر پلیٹ اسکوٹی برآمد ہوئی ہے۔

پولیس کے مطابق نوئیڈا کے رہائشی آشیش تیواری نامی شخص نے اطلاع دی کہ 26 دسمبر کو سیکٹر 75 میں واقع اسپیکٹرم مال دوست میں وہ اپنے دوست چندن کھنٹوال سے ملاقات کے لیے پہنچا اور گاڑی سڑک پر کھڑی کر کے گھر میں باتیں کرنے لگا۔آشیش کے مطابق وہ جب واپس آیا تو دیکھا کہ گاڑی کا شیشہ ٹوٹا ہوا تھا اور اس میں موجود چار لیپ ٹاپ، غیرملکی کرنسی سمیت دیگر اہم اشیا غائب تھیں۔کوتوالی پولیس نے مقدمہ درج کرنے کے بعد تفتیش شروع کی اور سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے تین رکنی گروہ کو جمعرات کے روز گرفتار کیا۔

پولیس کے مطابق حراست میں لیے گئے افراد نے بتایا کہ وہ مدن گیری نامی گینگ کے لیے کام کرتے ہیں جس کا سرغنہ سنجے عرف مائیکل نامی شخص ہے، گینگ کا سربراہ چوری شدہ سامان کو ٹھکانے لگا کر اسے فروخت کرنے کا کام کرتا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -بین الاقوامی -