پاکستان کو اللہ تعالیٰ نے بے پناہ نعمتوں سے نواز رکھا ہے:حاجی غلام علی

  پاکستان کو اللہ تعالیٰ نے بے پناہ نعمتوں سے نواز رکھا ہے:حاجی غلام علی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


     پشاور(سٹاف رپورٹر)گورنر خیبرپختونخوا حاجی غلام علی نے کہا ہے کہ آئین و قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے ہر کسی کو اپنے لیے جدوجہد کرنے کا حق حاصل ہے، قبائلی اضلاع کی مشکلات کا بخوبی علم ہے اور ملاکنڈ سمیت تمام قبائلی اضلاع کی سفارشات پر سنجیدگی سے عملی پیش رفت کی جائیگی، ہم نے نوجوانوں کو ہر حال میں جدید دور کے جدید ہنر سکھانے ہیں، ترقی کی منازل طے کرنے کے لیے وفاقی حکومت وزیراعظم محمد شہباز شریف کے  ویژن کے مطابق اپنے اپنے شعبوں میں کمال کردار ادا کرنا ہوگا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز ملاکنڈ ڈویژن سے آئے 150 رکنی وفد سے گورنر ہاؤس پشاور میں ملاقات کے بعد خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ملاکنڈ کے نمائندہ عوامی وفد میں علاقہ مشران کے ساتھ ساتھ نوجوانوں کی بھی کثیر تعداد شریک تھی۔ وفد میں ملاکنڈ کے سیاسی، سماجی، بزنس کمیونٹی اور دیگر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد شامل تھے۔ وفد نے گورنر سے ملاقات میں ملاکنڈ ڈویژن کو درپیش مسائل جن میں بجلی گیس سمیت مختلف شکلوں میں لاگو  ٹیکسز کی بھر مار کے حوالے سے تفصیلی بات چیت کرتے ہوئے گورنر حاجی غلام علی کو تمام تر موجودہ حالات سے آگاہ کیا۔ وفد نے مکمل عوامی انداز میں خوش آمدید اور مہمان نوازی کرنے پر گورنر کا دل سے شکریہ ادا کیا۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے گورنر حاجی غلام علی کا کہنا تھا کہ پاکستان کو اللہ نے بے پناہ نعمتوں سے نواز رکھا ہے جسکا جتنا شکر ادا کیا جائے وہ کم ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسی طرح اس ملک میں ہمارے قبائلی اضلاع مالک کائنات کے خصوصی کرم کے سائے میں ہیں کہ ان کی سرزمین کو قدرتی خزانوں کو وسائل کی شکل میں مالامال کرکے دیا۔ آج ضرورت اس امر کی ہے کہ ہمارے قبائلی علاقوں کے نوجوان خود کو اس قدر ہنر مند بنا لیں کہ وہ ان قدرتی وسائل جن میں خاص طور پر قیمتی پتھر، معدنیات، ماربل، مائنز اینڈ منرلز، کاپر شامل ہیں کی زمین سے نکالنے سے لے کر ان کی خوبصورتی تک کو حتمی شکل دینے کے ماہر ہوں، یعنی ان وسائل سے مستفید ہونے کے حق کے ساتھ ساتھ اسکی اہلیت بھی ان کی ملکیت ہو۔ انہوں نے کہا کہ ملاکنڈ ڈویژن سمیت تمام قبائلی اضلاع پر خصوصی توجہ دے رکھی ہے اور وزیراعظم محمد شہباز شریف کا بھی یہی ویژن ہے کہ ملک کے ہر شہری کی طرح ہمارے قبائلی عوام بھی آزادانہ طور پر ترقی و خوشحالی سے ہمکنار ہوں۔ انہوں نے کہا کہ یہ وقت نفرتوں کا نہیں پیار محبت و احترام سے ایک دوسرے کے ساتھ مل کر آگے بڑھنے کا ہے، ہم نے یہ نہیں دیکھنا کہ کوئی ایک ہوگا جو ہر کام کریگا بلکہ ہم نے یہ سوچنا ہے کہ ہمیں ہر ایک شہری کا، ہر ایک افسر کا، ہر ایک ذمہ دار کا دینی و ملکی بھائی بن کے ساتھ دینا ہے اور اتفاق و اتحاد کی اعلیٰ مثال قائم کرنی ہے، تب ہی ہم دنیا میں ترقی یافتہ ممالک کی صف میں صف اول کے حقدار ٹہرینگے۔ گورنر نے کہا کہ ملاکنڈ میں گیس بجلی اور ٹیکسز سمیت تمام مسائل کے حل کے لیے تمام متعلقہ اداروں سے بات کی جائیگی تاکہ عملی اقدامات اٹھاتے ہوئے مسائل کے حل کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب کا فرض ہے کہ آئین و قانون کی پاسداری کو یقینی بنائیں اور ہر ایک کو حق ہے کہ وہ آئین و قانون کو تسلیم کرتے ہوئے اس کے اندر رہ کر اپنے لیے جدوجہد کرے۔ گورنر کی جانب سے یقین دہانی پر وفد نے ان کا شکریہ ادا کیا۔