ملتان: پولیس اہلکار کی گھر سے لاش برآمد‘ تفتیش شروع 

ملتان: پولیس اہلکار کی گھر سے لاش برآمد‘ تفتیش شروع 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


ملتان (وقائع نگار) قتل یا خود کشی معاملہ سلجھ نہیں سکا۔ پولیس ملازم کی گھر سے لاش برآمد ہوئی ہے۔ابتدائی معلومات کے مطابق ملتان کے علاقے قیصر آباد گلی نمبر 2 میں پولیس ملازم  نے گھریلو جھگڑوں سے تنگ آکر خود کشی کر لی۔معلوم ہوا ہے کہ 50 (بقیہ نمبر2صفحہ6پر)
سالہ عبدالوحید کا گھر میں اکثر جھگڑا رہتا تھا اور وہ پولیس ملازم تھا۔ حادثے کی اطلاع ملنے پر پولیس افسران اور  ریسکیو کی ٹیمیں جائے حادثہ پر پہنچ گئیں۔ عبدالوحید اپنی جان کی بازی ہار چکا تھا اس موقع پر خود کشی کرنے والے پولیس ملازم کی اہلیہ نے ریسکیو ٹیموں کو بتایا کہ اکثر و بیشتر اس کا گھر میں جھگڑا رہتا تھا تاہم پولیس نے لاش کا  پوسٹ مارٹم کروایا۔اور قانونی کارروائی شروع کردی یے۔مزید تحقیقات بھی جاری ہیں۔جس میں اس بارے یہ معلوم کرنا ہے کہ مذکورہ  حادثہ ہے خود کشی کا ہے یا قتل کا۔جبکہ دوسری جانب پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ مرنے والے پولیس ملازم کی لاش کمرے میں موجود تھی۔سرکاری رائفل چارپائی پر الگ سے موجود تھی۔جس کے دستے پر کپڑا موجود تھا  وقوعہ سمیت دیگر باتوں سے  حالات مشکوک ہونے کی طرف جاسکتے ہیں۔تاہم اصل حقائق تفتیش کے بعد سامنے آئیں گے۔پولیس نیو ملتان نے 174 کی رپٹ لکھ دی ہے واضح رہے عبدالوحید وہاڑی میں تعینات ڈی ایس پی کے ساتھ ڈیوٹی پر تھا۔جو ملتان انکی رہائش پر بطور سکیورٹی والی ڈیوٹی سرانجام دے رہا تھا.واضح رہے گزشتہ روز متوفی کا نماز جنازہ ادا کردیا گیا یے۔جس میں مقامی پولیس بھی موجود تھی