موٹروے بیٹ افسر کا سردی میں ٹریکٹر ٹرالی ڈرائیور پر وحشیانہ تشدد‘ ناک کی ہڈی فریکچر

موٹروے بیٹ افسر کا سردی میں ٹریکٹر ٹرالی ڈرائیور پر وحشیانہ تشدد‘ ناک کی ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


بہاولپور، نور  پور نورنگا(ڈسٹرکٹ بیورو، نمائندہ پاکستان)موٹروے (بقیہ نمبر6صفحہ6پر)
پولیس بیٹ 20 کے آفیسر نے  رات کو شدید ٹھنڈ میں ٹریکٹر ٹرالی کے ڈرائیور پر بیمانہ تشدد کیا  ایس پی او محمد اشفاق کا ڈرائیور پر مکے برسانے سے اس کے ناک سے خون بہنے لگا اور وہ موقع پر بے ہوش ہوگیا،  تفصیل کے مطابق اوچشریف کے رہائشی کسان ملک محمد فاروق اپنی گنے سے بھری ٹریکٹر ٹرالی مسافر خانہ کے قریب واقع شوگر ملز پر لارہا تھا تو اچانک رات کو تقریبا ساڑھے 8 بجے مسافر خانہ کے قریب اس کی ٹریکٹر ٹرالی کا پیچھے والا ٹائر پھٹ گیا اور وہ الٹ گئی اس کے بعد تقریبا رات 9 بجے موٹروے پولیس کی گاڑی آئی اس میں سوار موٹروے پولیس کے آفیسر ایس پی او محمد اشفاق نے آتے ہی فورا اسے گریبان سے پکڑ لیا اور اس پر مکے مارنے کی بارش شروع کردی اس کے سبب ایک مکا اس کی ناک پر لگنے سے اس کی ناک کی ہڈی ٹوٹ گئی اور وہ موقع پر بے ہوش ہوگیا اس کے بعد وہاں موقع پر موجود افراد نے اسے ایک سول کار میں ڈال کر اسے قریبی ہسپتال میں مرحم پٹی کیلئے بھیج دیا اس کے بعد اسے جب ہوش آیا تو اس نے دیکھا کہ اسکے چہرے پرخون تھا اور اس کے ناک سے خون بہہ رہا تھا کپڑے بھی خون سے بھر گئے موٹروے پولیس کیایس پی او محمد اشفاق نے اسے بے دردی سے رات کو سخت سردی میں بدترین تشدد کا نشانہ بنایا۔  ڈرائیور ملک محمد فاروق نے آئی جی موٹروے پولیس و دیگر اعلی حکام سے موٹروے پولیس کے آفیسر ایس پی او محمد اشفاق کے خلاف سخت قانونی کارروائی کا مطالبہ کیا ہے