دیوار چین غائب ہونے لگی ،اس کے ساتھ کیا ہو رہاہے؟جان کر آپ کو سمجھ نہ آئے گی کہ ہنسیں یا روئیں

دیوار چین غائب ہونے لگی ،اس کے ساتھ کیا ہو رہاہے؟جان کر آپ کو سمجھ نہ آئے گی ...
دیوار چین غائب ہونے لگی ،اس کے ساتھ کیا ہو رہاہے؟جان کر آپ کو سمجھ نہ آئے گی کہ ہنسیں یا روئیں

  

بیجنگ (نیوز ڈیسک) دنیا کے سات عجوبوں میں سے ایک عظیم دیوار چین کے بارے میں ایک حالیہ رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ یہ عظیم دیوار تیزی سے صفحہ ہستی سے غائب ہورہی ہے جبکہ اس کا تقریباً ایک تہائی حصہ پہلے ہی وقت کی دست برد کا شکار ہوکر ختم ہوچکا ہے۔

تقریباً 2000سال قبل بنائی گئی دیوار چین کی تباہی میں قدرتی کٹاﺅ، انسانی سرگرمیوں اور حفاظتی اقدامات کی کمی کو اہم عوامل قرار دیا گیا ہے، جن کے باعث اس کا تقریباً 1220میٹر لمبائی پر مشتمل حصہ غائب ہوچکا ہے۔ اخبار ”پیپلز ڈیلی آن لائن“ کے مطابق منگ سلطنت کے دور میں بنائی گئی دیوار، جو کہ دیوار چین کا نمایا ترین حصہ ہے، کا صرف 8فیصد حصہ ہی اچھی طرح محفوظ حالت میں موجود ہے۔

اخبار ’بیجنگ ٹائمز‘ کے مطابق مختلف چینی سلطنتوں کے ادوار میں تعمیر کی جانے والی دیوار کی کل لمبائی تقریباً 13000میل تک ہے لیکن اب اس کے اکثر حصے بربادی کے شکار ہیں۔ گریٹ وال آف چائنا سوسائٹی کے ایک سروے میں یہ بھی پتا چلا ہے کہ دیوار پر درختوں اور پودوں کے اگنے اور بڑی مقدار میں سیاحوں کی آمد نے بھی اس کی تباہی میں اہم کردار ادا کیا۔ دیوار میں استعمال کئے گئے تاریخی پتھروں اور اینٹوں کی چوری بھی ایک تشویشناک مسئلہ ہے۔

عظیم دیوار چین کا شمار عالمی ورثے میں کیا جاتا ہے۔ اسے ابتدائی طور پر شمالی چین اور جنوبی منگولیا کی سرحدوں پر تعمیر کیا گیا تھا۔ اس کا مشہور ترین حصہ منگ وال کہلاتا ہے جسے 1368سے 1644کے دور میں تعمیر کیا گیا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس