سڑکوں کے میٹریل اور ڈیزائن ٹیسٹ فیل ہونے کے باوجود ٹھیکداروں کو ادائیگی

سڑکوں کے میٹریل اور ڈیزائن ٹیسٹ فیل ہونے کے باوجود ٹھیکداروں کو ادائیگی

لاہور(شہباز اکمل جندران//انوسٹی گیشن سیل) سی اینڈڈبلیو پنجاب میں دن بدن کرپشن بڑھنے لگی۔سٹرکوں کی تعمیر کے دوران لیبارٹری سے مٹیریل اور ڈیزائن کے ٹیسٹ فیل ہونے کے باوجود ٹھیکیداروں کو کروڑوں روپے کی ادائیگی کردی گئی۔لاہور ، ڈی جی خان، راولپنڈی ، فیصل آباد ، ساہیوال ،گوجرانوالہ ، بہاولپور ، ملتان اور سرگودھا ڈویژنوں میں سب گریڈ ، سب بیس اور بیس کے 3سو 20ٹیسٹوں میں سے178ٹیسٹ فیل جبکہ صرف 151ٹیسٹ پاس ہوسکے۔ سیکرٹری سی اینڈڈبلیو نے معاملے کی چھان بین کے لیے ہائی ویز پنجاب کے دونوں چیف انجنئیروں سے رپورٹ طلب کرلی ہے ۔معلوم ہوا ہے کہ سی اینڈڈبلیو پنجاب کے انجنئیروں نے تما م قواعد وضوابط کو پس پشت ڈالتے ہوئے روڈ ریسرچ لیبارٹری کے مٹیریل اور ڈیزائن کے ٹیسٹوں میں فیل ہونے کے باوجود صوبے کی 9ڈویژنوں میں ٹھیکیداروں کوکروڑوں روپے کی ادائیگیاں کردی گئی ہیں۔ذرائع کے مطابق ڈائریکٹر روڈ ریسرچ رانا نثار احمد کی طرف سے صوبائی سیکرٹری سی اینڈڈبلیو پنجاب کو 6جون کو ایک رپورٹ ارسال کی گئی ہے۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ڈیرہ غازی خان میں سب گریڈ کے صرف پانچ ٹیسٹ پاس اور30فیل ہوئے ۔سب بیس کے صرف دو ٹیسٹ پاس اور 23فیل ہوئے۔جبکہ بیس کے تمام 13ٹیسٹ فیل ہوئے۔راولپنڈی ڈویژن میں سب گریڈ کے 10ٹیسٹ پاس اور 5فیل ہوئے ۔ اسی طرح سب بیس کے 5ٹیسٹ پاس اور 3فیل ہوئے۔جبکہ بیس کا ایک ٹیسٹ پاس ہوسکا۔ ساہیوال ڈویژن میں سب گریڈ کے 8ٹیسٹ پاس اور 7فیل ہوئے۔سب بیس کے تین ٹیسٹ پاس اور ایک فیل ہوا۔گوجرانوالہ میں سب گریڈ کے 10ٹیسٹ پاس اور 7فیل ہوئے ۔سب بیس کے 2ٹیسٹ پاس اور 12فیل ہوئے۔ جبکہ بیس کا ایک ٹیسٹ پاس اور 11فیل ہوئے۔ اسی طرح لاہور ڈویژن میں سب گرید کے 6ٹیسٹ پاس اور 25فیل ہوئے۔سب بیس کے 6پاس ور11فیل ہوئے ۔جبکہ بیس کے دو پاس اور ایک ٹیسٹ فیل ہوا۔بہاولپورڈویژن میں سب گریڈ کے 28ٹیسٹ پاس اور 3فیل ہوئے۔سب بیس کے 6ٹیسٹ پاس اور 5ٹیسٹ فیل ہوئے۔جبکہ بیس کے چار ٹیسٹ پاس اور ایک ٹیسٹ فیل ہوا۔سرگودھا ڈویژن کے ٹیسٹوں کا ریکارڈ رپورٹ میں ظاہر نہیں کیا گیا۔ذرائع کے مطابق صوبائی سیکرٹری مواصلا ت وتعمیرات پنجاب نے معاملے کی چھان بین کا فیصلہ کرتے ہوئے چیف انجنئیر ھائی ویز نارتھ وساؤتھ پنجاب سے رپورٹ طلب کر لی ہے۔

سی ایندڈبلیو

مزید : صفحہ آخر