انڈونیشیا ، فوجی طیارہ رہائشی علاقے میں گر کر تباہ ، 116افراد ہلاک

انڈونیشیا ، فوجی طیارہ رہائشی علاقے میں گر کر تباہ ، 116افراد ہلاک

 جکارتا(خصوصی رپورٹ) انڈونیشیا میں فوجی طیارہ ٹیک آف کرنے کے دو منٹ بعد رہائشی علاقے میں گر کر تباہ ہو گیا۔ حادثے میں 116 افراد ہلاک ہو گئے۔چار انجن والا ہرکو لیس طیارہ مدان کی ائیر فورس بیس سے ٹیک آف کرنے کے دو منٹ بعد ہی مدان کے رہائشی علاقے میں گر گیا۔ طیارہ، ہوٹل اور مکان پر گرا اور اس میں آگ لگ گئی جس سے کئی گاڑیاں بھی جل گئیں۔ حادثے کے بعد شدید آگ اور دھویں کی وجہ سے امدادی کارکنوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ ائیر فورس چیف کے مطابق ٹیک آف کرنے کے بعد پائلٹ نے طیارے میں تکنیکی خرابی کی وجہ سے واپس ائیر بیس آنا چاہا لیکن اسی لمحے طیارہ عمارتوں سے ٹکراتا ہوا نیچے جا گرا۔ حکام کے مطابق طیارے میں 113 افراد سوار تھے۔ انڈونیشین ایئر فورس چیف کا کہنا ہے کہ انہوں نے حادثے کی جگہ کا معائنہ کیا جہاں اب تک 66 لاشوں کو طیارے سے نکال لیا گیا ہے جب کہ دیگر لاشوں کی تلاش کا کام جاری ہے۔ خوفناک حادثے کے باعث حکام نے مزید ہلاکتوں کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔

دو ہزار نو میں بھی جکارتا سے مشرقی جاوا جانے والے سی 130 ہرکو لیس طیارے کے حادثے میں 97 افراد ہلاک ہوئے تھے۔ 28 دسمبر 2014 میں انڈونیشیا کی فضائی کمپنی ایئر ایشیا کا مسافر طیارہ بحیرہ جاوا میں گر کر تباہ ہو گیا۔ طیارے میں سوار 155 مسافروں میں سے کوئی بھی نہ بچ سکا۔ آٹھ مارچ 2014 کو ملائیشیا کا مسافر طیارہ ایم ایچ 370 پر سرار طور پر دوران پرواز لاپتہ ہو گیا۔ جہاز پر 15 ممالک کے 227 مسافر سوار تھے کئی ماہ تک جاری رہنے والے سرچ ا?پریشن کے باوجود ایم ایچ 370 کا آج تک پتہ نہیں چلایا جا سکا۔

مزید : صفحہ اول