آرمی چیف کی قبائلی عمائدین پارا چنار سے ملاقات ایف سی کمانڈنٹ تبدیل دھرنا ختم ، ہر پاکستانی ہمارا بھائی اور طاقت ہے دہشتگردی کیخلاف جنگ جیتیں گے : جنرل باجوہ

آرمی چیف کی قبائلی عمائدین پارا چنار سے ملاقات ایف سی کمانڈنٹ تبدیل دھرنا ...

  



پارا چنار(نمائندہ پاکستان ،مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی کوششوں سے پارا چنار کے قبائلی عمائدین نے گزشتہ جمعہ سے جاری دھرنا ختم کر دیاجبکہ آرمی چیف نے قبائلی عمائدین کی جانب سے علاقے کی سکیورٹی سے متعلق مطالبات پر فوری طور پر عمل کرنے کا حکم دے دیا۔تفصیلات کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے جمعہ کے روز پارا چنار کا دورہ کیا جہاں انہوں نے قبائلی عمائدین سے ملاقاتیں کیں ، اس موقع پر عمائدین نے پاک فوج اور اسکی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہم صرف پاکستانی اور مسلمان ہیں، ہمارا خون پاکستان کیلئے ہے ،ہم بہادر افواج کے کردار اور مشکلات کو سمجھتے ہیں، مقامی قبائلی عمائدین نے دھرنا ختم کرنے سے متعلق اپنے مطالبات بھی پیش کئے جس پر آرمی چیف نے علاقے کی سکیورٹی سے متعلق مطالبات پر فوری طور پر عمل کرنے کا حکم دیدیااور پاراچنار میں کئی روز سے جاری دھرنے کے شرکا نے قبائلی عمائدین کی پاک فوج کے سربراہ قمر جاوید باجوہ سے ملاقات اور تمام تر یقین دہانیوں کے بعد دھرنا ختم کرنے کا اعلان کردیا۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے قبائلی عمائدین سے ملاقاتوں اور جرگے سے خطاب میں دہشت گردی کے پے در پے واقعات پر افسو س کا اظہارکرتے ہوئے کہا پارا چنار پاکستان کا حصہ ہے، ایک ایک انچ اور ایک ایک فرد ہمارے لیے اہم ہے۔ پارا چنار کو سیف سٹی بنانے کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جارہے ہیں۔ پارا چنار میں دہشت گردی کے متاثرین کو ملک کے دیگر علاقوں کے برابر امداد دی جائے گی۔ ہر پاکستانی ہمارا بھائی اور آپ ہی ہماری طاقت ہیں لہٰذا ہر پاکستانی میرے لیے برابر ہے چاہے وہ غیر مسلم ہی ہو، دھماکے کے مقامی سہولت کاروں کو پکڑلیا ہے اور ان کا مقدمہ فوجی عدالتوں میں چلائیں گے جبکہ حالیہ واقعات میں غیرملکی ہاتھ کے ملوث ہونے کے واضح شواہد ملے ہیں۔ ایف سی خیبر پختونخوا پروفیشنل فورس ہے، اس میں تمام مسالک کے جوان شامل ہیں جو دفاع وطن میں کردار ادا کر رہے ہیں، پارا چنار دھماکوں کے بعد ہجوم کو کنٹرول کرتے ہوئے ایف سی کی جانب سے فائرنگ کے واقعے کی تحقیقات کر رہے ہیں، اس میں ملوث افراد کو سزاء دی جائے گی جبکہ ایف سی کمانڈنٹ پارا چنار کو پہلے ہی تبدیل کردیا گیا ہے ،ایف سی کے جوان انتہائی جانفشانی کے ساتھ اپنی ذمہ داریاں ادا کر رہے ہیں۔دشمن ہمارے عزم کو کمزور اور ہمیں ناکام کرنے کی کوشش کر رہا ہے جسے ہم اتحاد و اتفاق سے شکست دیں گے۔ فائرنگ سے شہید اور زخمیوں کو ایف سی علیحدہ سے معاوضہ دے گی جبکہ سیف سٹی پراجیکٹ کے تحت پاراچنار میں سی سی ٹی وی کیمرے لگائے جارہے ہیں۔ سرحدوں پر باڑ لگانے کا کام جاری ہے اور پہلے مرحلے میں فاٹا کے حساس علاقوں سے ملحق سرحد پر باڑ لگائی جائے گی جبکہ دوسرے مرحلے میں بلوچستان تک پاک افغان سرحد پر باڑ لگائی جائے گی۔سربراہ پاک فوج نے دہشت گردی کیخلاف جنگ جیتنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا یہ غیر روایتی جنگ ہے اسی لیے خطرناک ہے اور ہم نے بحیثیت قوم دہشت گردی کیخلاف جنگ میں بے پناہ قربانیاں دیں ہیں لہٰذا ہم دہشت گردی کیخلاف یہ جنگ جیتیں گے۔ دورہ سے قبل پارا چنار دھماکوں کی مذمت کرتے ہوئے آرمی چیف جنرل کا کہنا تھا دشمن اپنی بزدلانہ کارروائیوں سے قوم کی خوشیوں کو خراب کرنے کی کوشش کر رہا ہے تاہم وہ ایسا کرنے میں ناکام ہوگا۔بعد ازاں پاراچنار میں میڈیا سے گفتگو میں ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کا کہنا تھا پورے پاکستان کے عوام برابر ہیں اور ہرجگہ کی سکیورٹی ہمارے لیے برابر اہمیت رکھتی ہے۔ پاراچنارکیلئے سیف سٹی پراجیکٹ پرکام شروع کردیاگیا ہے اور شہر کو محفوظ بنانے کے لیے پاک فوج کے دستے یہاں پہنچ رہے ہیں۔پاک فوج افغان سرحد سمیت ملک بھر میں قیام امن کیلئے اقدامات کررہی ہے۔ ہم کسی بھی فرقے سے بالاتر صرف پاکستانی اور مسلمان ہیں۔پاکستان سے دہشت گردی کے عفریت کو ختم کرنے کیلئے مل کرکوششیں کرنے کی ضرورت ہے۔ادھرقبائلی رہنما علامہ مزمل حسین کے مطابق مسائل کے حل کیلئے کمیٹی تشکیل دی جائے گی۔ دہشت گردی کے متاثرین کو ملک کے دیگر علاقوں کے برابر پیکج دینے سمیت فائرنگ سے جاں بحق افراد کو شہید پیکج اور سرکاری نوکری دی جائے گی۔ یاد رہے گزشتہ ہفتے پارا چنار کے بازار میں عین اسوقت یکے بعد دیگرے دو دھماکے ہوئے تھے جب لوگوں کی بڑی تعداد عید کی خریداری میں مصروف تھی جس میں 75 افراد جاں بحق اور100 کے قریب زخمی ہوئے تھے جس کے بعد متاثرین اور مقامی عمائدین نے اپنے مطالبات کے حق میں دھرنا دیدیا تھا۔

جنرل باجوہ

مزید : صفحہ اول


loading...