سید صلاح الدین کو دہشتگرد قرار دیئے جانے کیخلاف جماعت اسلامی کا 9جولائی کو امریکی سفارتخانے کی جانب سے احتجاجی مارچ کا اعلان

سید صلاح الدین کو دہشتگرد قرار دیئے جانے کیخلاف جماعت اسلامی کا 9جولائی کو ...

  



لاہور(ایجوکیشن رپورٹر) جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سینیٹرسراج الحق نے امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے حزب المجاہدین کے کمانڈر سید صلاح الدین کو دہشت گرد قرار دیئے جانے کی شدید مذمت کرتے ہوئے9جولائی کو امریکی سفارتخانے کی طرف احتجاجی مارچ کا اعلان کردیا ،جے آئی ٹی کے فیصلے کے بعد بیرونی بینکوں میں موجود ملکی دولت پاکستان لانے کے عزم کا بھی اظہار،کرپٹ حکمرانوں کا ساتھ دینے والے اور کرپشن میں لتھڑے ہوئے اداروں کا قبلہ درست کرکے انہیں قومی ادارے بنائیں گے۔منصورہ میں نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ امریکہ کشمیر کی تحریک آزادی کو ختم کرنے کیلئے کھل کر سامنے آگیا ہے،مودی کل تک دہشت گرد تھا اور یورپ اور امریکہ میں اس کے داخلے پر پابندی تھی اور اب وہ امریکی صدرٹرمپ کا جگری یار بن گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ دنیا کا سب سے بڑا دہشت گرد خود امریکہ ہے جو بھارت اور اسرائیل کی سرپرستی کررہا ہے جبکہ عالم اسلام کے بزدل اور امریکی کاسہ لیس حکمران اسلام کیخلاف جاری جنگ میں امریکہ کے اتحادی بنے ہوئے ہیں۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ لندن،پاناما ،دبئی اور سوئس بینکوں میں موجود اربوں ڈالر کسی غریب کے نہیں بلکہ باریاں بدل بدل کر حکمران بننے والوں کی ملکیت ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ملک سے لوٹی گئی دولت کا کھوج لگانے اور اسے بے نقاب کرکے پاکستان لانے کیلئے جماعت اسلامی نے خصوصی سیل قائم کردیا ہے اور بہت جلد ایک ویب سائٹ بھی بنائی جائے گی تاکہ اندورون و بیرون ملک پاکستانی چوری کی اس دولت کے بارے میں جان سکیں ۔انہوں نے اوور سیز پاکستانیوں سے بھی اپیل کی کہ وہ اس اہم قومی خدمت میں جماعت اسلامی کا ساتھ دیں۔

مزید : صفحہ آخر