خیالات کا اظہار کرنا کوئی جرم نہیں ، وزیر اعلٰی پنجاب کیخلاف غداری مقدمہ درج کرنیکی درخواست مسترد

خیالات کا اظہار کرنا کوئی جرم نہیں ، وزیر اعلٰی پنجاب کیخلاف غداری مقدمہ درج ...

  



لاہور ( نامہ نگار) سیشن عدالت نے وزیر اعلی پنجاب شہباز شریف کیخلاف غداری کا مقدمہ درج کرنے سے متعلق درخواست مسترد کردی، عدالت نے اپنے فیصلے میں قراردیا ہے کہ سابق حکمرانوں سے شہباز شریف کی کارکردگی بہترہے، وہ سب سے زیادہ اہل وزیر اعلیٰ ہیں،ان پر بہت سے الزامات سہی، لیکن بہترین کارکردگی کی بنا پر ایسے الزامات کو نظر انداز کردیناچاہیے ۔گزشتہ روز ایڈیشنل سیشن جج رفاقت علی گوندل نے در خو است گزار اظہرعباس کی وزیر اعلی پنجاب شہباز شریف کیخلاف غداری کا مقدمہ درج کرنے سے متعلق درخواست پر فیصلہ سنادیا،جس کے مطابق معاشرے کی فلاح کیلئے شہباز شریف بہترین کام کررہے ہیں، سیاسی تقاریر میں سیاستدان اپنے خیالات کا اظہار کرتے رہتے ہیں،اگر کسی تقریب میں شہباز شریف نے اپنے خیالات کا اظہار کیا بھی ہے تو یہ کوئی جرم نہیں،فاضل جج نے اپنے فیصلے میں درخواست گزار کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے قراردیاہے کہ بہت سے لوگ شہرت حاصل کرنے کیلئے ایسے کیسز دائر کرتے رہتے ہیں، ایسے عناصر کی حوصلہ شکنی کی جانی چاہئے، واضح رہے شہری اظہرعباس نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا تھا کہ شہباز شریف کا سیاستدانوں اور جرنیلوں کی طرف سے پاکستان کو برباد کرنے کا بیان ایماندار سیاستدانوں کی ساکھ کو نقصان پہنچانے کے مترادف ہے ،شہباز شریف نے بانی پاکستان قائداعظم ؒ کی توہین سمیت تین مرتبہ منتخب ہونیوالے وزیر اعظم نواز شریف کی کارکردگی پر بھی سوالیہ نشان لگا دیا ، درخواست گزار نے عدالت سے استدعا کی تھی کہ اس ضمن میں شہباز شریف کیخلاف غداری کا مقدمہ درج کیا جائے، پولیس کی جانب سے عدالت میں جمع کرائی گئی رپورٹ میں کہا گیاکہ ایسا کوئی وقوعہ تھانے کی حدود میں نہیں ہوا، درخواست گزار نے جو جگہ لکھی ہے وہ ماڈل ٹاؤن تھانے کی حدود میں نہیں آتی،درخواست بے بنیاد ہے لہٰذا خارج کی جائے۔

درخواست مسترد

مزید : صفحہ اول


loading...