محمد حفیظ کے ننھے بیٹے نے گھر کی ایسی بات بتادی کہ ہر طرف قہقہے بلند ہوگئے، پروفیسر کو ہاتھ جوڑنے پر مجبور کردیا

محمد حفیظ کے ننھے بیٹے نے گھر کی ایسی بات بتادی کہ ہر طرف قہقہے بلند ہوگئے، ...
محمد حفیظ کے ننھے بیٹے نے گھر کی ایسی بات بتادی کہ ہر طرف قہقہے بلند ہوگئے، پروفیسر کو ہاتھ جوڑنے پر مجبور کردیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بچے بلاشبہ معصوم ہوتے ہیں اور امید کی جاتی ہے کہ حالات جیسے بھی ہوں وہ سچ ہی بولتے ہیں۔ ایسا ہی کچھ قومی کرکٹ ٹیم کے پروفیسر محمد حفیظ کے بچوں نے بھی کیا جنہوں نے ایک ٹی وی پروگرام کے دوران گھر کی ایسی ایسی باتیں بتائیں کہ محمد حفیظ کو ہاتھ جوڑنے پر مجبور کردیا۔

تفصیلات کے مطابق قومی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں نے نجی ٹی وی بول نیوز کے گیم شو ایسے چلے گا میں شرکت کی۔ اس دوران میزبان ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے ایک سوال کیا جس کا محمد حفیظ نے بالکل درست جواب دیا اور مہران کار انعام میں حاصل کرلی۔ جب کار کی چابی دینے کی باری آئی تو محمد حفیظ نے کہا کہ گاڑی کی چابی ان کے بیٹے روشان کو دی جائے۔

میزبان ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے محمد حفیظ کے بیٹے کو گاڑی کی چابی دی تو ساتھ ہی سوال بھی کرلیا کہ ” جب پاپا آﺅٹ ہوتے ہیں تو گھر میں کیا ماحول ہوتا ہے“۔ محمد حفیظ کے چھوٹے سے بیٹے نے نیشنل ٹی وی کا لحاظ کیے بغیر برجستہ جواب دیا کہ ” جب پاپا آﺅٹ ہوتے ہیں تو ماما چیخیں مارتی ہیں“۔ محمد حفیظ کے بیٹے کا جواب سن کر ہر طرف قہقہے بکھر گئے ، اس کے بعد عامر لیاقت حسین نے ان کی بیٹی سے سوال کیا کہ جب ماما چیخیں مارتی ہیں تو کیا ہوتا ہے؟ ۔ محمد حفیظ کی ننھی بیٹی نے بھی باپ کے چہرے کی طرف دیکھے بغیر ہی برجستہ جواب دیا کہ ”جب ماما چیخیں مارتی ہیں تو سب لوگ ڈر جاتے ہیں“۔ اس سے پہلے کہ میزبان کوئی اور سوال پوچھتا محمد حفیظ نے ہاتھ جوڑ دیے اور کہا کہ ” عامر بھائی کچھ باتیں رہنے بھی دیں“۔

بیٹے اور بیٹی سے سوالات کے بعد میزبان نے پروفیسر کی اہلیہ سے سوال کیا کہ ” جب محمد حفیظ بہت اچھا پرفارم کرتے ہیں تو آپ انہیں کیا کہتی ہیں“۔ محمد حفیظ کی اہلیہ نے بتایا کہ وہ اپنے شوہر کو اچھی پرفارمنس پر ” چندا“ کے نام سے پکارتی ہیں۔ ان کی اہلیہ نے مزید بتایا کہ محمد حفیظ کی عرفیت چندا ہے اور پورا خاندان انہیں اسی نام سے پکارتا ہے۔

مزید : کھیل