انتخابات میں دھاندلی ہوئی تو طوفان اُٹھے گا جسے سنبھالنا مشکل ہوگا ، نواز شریف

انتخابات میں دھاندلی ہوئی تو طوفان اُٹھے گا جسے سنبھالنا مشکل ہوگا ، نواز ...

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک )مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف کا کہنا ہے اگر انتخابات میں دھاندلی ہوئی تو طوفان اٹھے گا جسے سنبھالنا مشکل ہو گا۔ گزشتہ روزلندن میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے نواز شریف کا کہنا تھا ساری توپوں کا رخ مسلم لیگ (ن) کی طرف ہے، ہما رے انتخابی امیدوار کو بلا کر ڈرایا دھمکایا گیا اور ملتان میں ہمارے امیدوار رانا اقبال سراج کو تھپڑ مارے گئے اور خطرناک نتائج کی دھمکیاں دی گئیں، ہمارے نمائندوں کی وفاداریاں تبدیل کرائی جا رہی ہیں اور جیپ کے نشان پر الیکشن لڑنے پر مجبور کیا جا رہا ہے، ہمارے نمائندوں کی تذلیل کی جارہی ہے۔سابق وزیراعظم کا کہنا تھا ہم نے غلطیوں سے کوئی سبق نہیں سیکھا لیکن ایسے اقدامات ملک کیلئے نقصان دہ ہونگے ۔انہوں نے کہا نگران وزیراعظم اور چیف الیکشن کمشنر سے مطالبہ کیا کہ( ن) لیگ کے امیدواروں کو دھمکیوں کا نوٹس لیں، اگر انتخابات میں دھاندلی ہوئی تو طوفان اٹھے گا جسے سنبھالنا مشکل ہو جائے گا۔

نواز شریف

لندن(آئی این پی)سابق وزیراعظم نوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز نے کہا ہے کہ وطن واپسی کا فیصلہ والدہ کی صحت سے مشروط ہے،(ن) لیگ کو ووٹر سے دور نہیں کیا جا سکتا ،جب ملک ترقی کے راستے پر آتا ہے تو اسے پیچھے دھکیل دیا جاتا ہے ، نوازشریف کا ہاتھ ہوگا وہی جیتے گا ۔ہفتہ کو میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا کہ 2018ء کا الیکشن ریفرنڈم ہے ، الیکشن میں دھاندلی نہیں ہوسکتی ، جس پر نوازشریف کا ہاتھ ہوگا وہی جیتے گا ، عوام جانتے ہیں کہ کس کو ووٹ ڈالنا ہے ، وطن واپسی کا فیصلہ والدہ کی صحت سے مشروط ہے لیکن وطن واپس ضرور جائیں گے ،پوری قوم کی دعائیں میری والدہ کے ساتھ ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ نوازشریف کا بیانیہ گھر گھر پہنچ چکا ہے جب ملک ترقی کے راستے پر آتا ہے تو اسے پیچھے دھکیل دیا جاتا ہے ، پاکستانی قوم جمہوریت اور پاکستان کے بہتر مستقبل کیلئے اچھا فیصلہ کرے گی ، ووٹر کو خریدا نہیں جا سکتا، (ن) لیگ کو ووٹر سے دور نہیں کیا جا سکتا ، مسلم لیگ (ن) کو نشانہ بنایا جا رہا ہے ، اگر عوام کی رائے تبدیل ہوتی تو الیکشن سے پہلے دھاندلی نہ ہوتی ، مسلم لیگ (ن) کا نشان چھیننے سے پہنچان نہیں چھین سکتے ۔

مزید : صفحہ اول