کلینکل پیتھا لوجسٹ کے پرومویشن کیس میں حکم امتناعی جاری

کلینکل پیتھا لوجسٹ کے پرومویشن کیس میں حکم امتناعی جاری

  

 پشاور(نیوز رپورٹر) سروس ٹریبونل کی ممبرروزینہ رحمان نے کلینکل پیتھالوجسٹ کے پروموشن کیس میں حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے متعلقہ حکام سے جواب طلب کرلیا جونیئر کلینکل ٹیکنالوجسٹ پیتھالوجی حیات اللہ کی جانب سے سیف اللہ محب کاکاخیل ایڈوکیٹ عدالت میں پیش ہوئے اوربتایا کہ اسکا موکل بنوں میڈیکل کالج میں فرائض انجام دے رہا ہے وہ کلینکل ٹیکنالوجسٹ پیتھالوجی (گریڈ17)کیلئے اہل ہیں اور رولز کے مطابق 40 فیصد سینیارٹی کم فٹنس اور 40 فیصد ابتدائی تقرری کی بنیاداور 20 فیصد ٹیکنالوجسٹ گریڈ14اورگریڈ16 میں سے پروموشن ہونی تھی جبکہ انیستھیزیا اور ڈینٹل وغیرہ جتنے بھی پیرامیڈیکل عملہ کی پروموشن تھی وہ ہو گئی اور صرف پیتھالوجی والوں کو روکے رکھا ہوا ہے اسے ڈیپارٹمینٹل اپیل کا جواب بھی نہیں دیا گیا اورجوازیہ پیش کیاجارہا ہے کہ مائکرو بیالوجی اور پیتھالوجی کی ڈگری کا مسئلہ بنا ہوا ہے اوریہ مسئلہ حل ہونے پر ہی پروموشن ہوسکے گی سنگل ممبربنچ نے دلائل سننے کے بعد متعلقہ حکام کو احکامات جاری کیے کہ درخواست گذارکے خلاف کسی قسم کی کارروائی نہ کی جائے اور نوٹس جاری کرکے جواب طلب کرلیا گیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -