سول سیکرٹریٹ ایسے ہے جیسے بچے کو جھنجھنا دیدیا جائے‘ ظہور دھریجہ

  سول سیکرٹریٹ ایسے ہے جیسے بچے کو جھنجھنا دیدیا جائے‘ ظہور دھریجہ

  

ملتان(سٹی رپورٹر)سرائیکستان قومی کونسل کے صدر ظہور دھریجہ نے کہا ہے کہ سول سیکرٹریٹ صوبے کا متبادل نہیں، وزیراعلیٰ کا یہ کہنا غلط ہے کہ ہم نے وعدہ پورا کر دیا۔ ہم واضح کرنا چاہتے ہیں کہ سول سیکرٹریٹ کا نہیں صوبے(بقیہ نمبر29صفحہ6پر)

کا وعدہ ہوا تھا۔ الیکشن کمپین سول سیکرٹریٹ نہیں بلکہ صوبے کے نام پر چلائی گئی اور صوبہ محاذ کا عمران خان سے تحریری معاہدہ صوبے کا تھا نہ کہ سول سیکرٹریٹ کا۔ ظہور دھریجہ نے کہا کہ سول سیکرٹریٹ ایسے ہے جیسے بچے کو جھنجھنا دیدیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ وسیب کی مکمل حدود اور شناخت کے مطابق صوبہ بنایا جائے۔ سول سیکرٹریٹ کے لولی پاپ کو مسترد کرتے ہیں،حکومت وسیب کے کروڑوں افراد سے مذابق بند کرے، ملتان بہاولپور کی تقسیم قبول نہیں، ہم وسیب کی یکجہتی کی بات کرتے ہیں اور ہمارا نعرہ ٹانک تا پاکپتن، ایک وطن ایک وطن ہے۔ اس کے ساتھ ہمارا نعرہ ”بہاولپور نہ ملتان صوبہ صرف سرائیکستان“ ہے۔ وزیراعظم عمران خان اور وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو خبردار کرتے ہیں کہ وہ سرائیکی قوم کی توہین نہ کریں ورنہ ان کے خلاف پورے وسیب میں مہم چلائیں گے اور لوگوں کو کہیں گے کہ ان کو ووٹ کا جواب ”پھؤٹ“ سے دیا جائے۔

ظہوردھریجہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -