4 روز سے 2 قبائل میں "جنگ" جاری ، اب تک کتنے لوگ مارے گئے؟ جان کر آنکھوں میں آنسو آجائیں

4 روز سے 2 قبائل میں "جنگ" جاری ، اب تک کتنے لوگ مارے گئے؟ جان کر آنکھوں میں آنسو ...
4 روز سے 2 قبائل میں

  

کرم (ڈیلی پاکستان آن لائن) ضلع کرم میں زمین کے تنازعے پر ہونے والی جھڑپ چوتھے روز بھی جاری ہے ، اب تک اس تنازعے کی وجہ سے 10 افراد جاں بحق اور 40 سے زائد زخمی ہوچکے ہیں۔

لوئر کرم کے علاقے بالش خیل میں پاڑہ چمکنی اور بالش خیل قبائل کے درمیان زمین کا تنازعہ کئی برسوں سے چلا آرہا ہے۔ گزشتہ 4 روز سے دونوں قبائل میں اسی تنازعے پر جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے جس کے نتیجے میں 10 افراد جاں بحق اور 40 سے زائد زخمی ہوچکے ہیں۔

اس " جنگ" کو رکوانے کیلئے ضلعی انتظامیہ، پولیس، اراکین اسمبلی اور قبائلی عمائدین بھرپور کوششیں کر رہے ہیں لیکن اب تک کوئی پیشرفت نہیں ہوسکی۔ گزشہ روز پی ٹی ایم کے رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ نے ٹوئٹر پر حکومت سے اس جھڑپ کو رکوانے کی درخواست بھی کی تھی۔ اس خونی جھڑپ کو رکوانے کیلئے قبائلی طلبہ اور دیگر تنظیموں کا پارا چنار میں دھرنا، اسلام آباد اور پشاور میں احتجاج جاری ہے۔

یہاں یہ بھی واضح رہے کہ قبائل کی اس لڑائی میں بھاری اور خود کار ہتھیاروں کا استعمال کیا جارہا ہے، اوپر دی گئی تصویر فائرنگ کی ایک ویڈیو سے لی گئی ہے جس میں استعمال ہونے والی گولیوں کی تعداد واضح دیکھی جاسکتی ہے۔

مزید :

علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -