”میری خواہش ہے کہ پاکستان انگلینڈ کیخلاف سیریز میں ویسی کارکردگی دکھائے جیسی 1990ءمیں۔۔۔“ شعیب اختر نے دل کی بات کہہ دی

”میری خواہش ہے کہ پاکستان انگلینڈ کیخلاف سیریز میں ویسی کارکردگی دکھائے ...
”میری خواہش ہے کہ پاکستان انگلینڈ کیخلاف سیریز میں ویسی کارکردگی دکھائے جیسی 1990ءمیں۔۔۔“ شعیب اختر نے دل کی بات کہہ دی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق فاسٹ باﺅلر شعیب اختر نے کہا ہے کہ ہماری خواہش ہے کہ پاکستان انگلینڈ کے خلاف آئندہ سیریز میں 1990ءکے آخر میں دورہ  انگلینڈ جیسی کرکٹ کا مظاہرہ کرے اور جیت کر واپس آئے۔

تفصیلات کے مطابق شعیب اختر نے کہا کہ 1990ءکی دہائی کے آخر میں جب ہم عامر سہیل، سعید انور، اعجاز احمد، انضمام الحق، سلیم ملک، وسیم اکرم اور رزاق کی طرح کرکٹ کھیلتے تھے تو یہ سب جارحانہ مزاج کے ساتھ کھیلتے تھے۔ پوری دنیا کی نظریں پاک، برطانیہ سیریز پر ہوں گی اور پاکستان سے شاندار کرکٹ کی توقعات بھی زیادہ ہوں گی، صورتحال کو جانچنے کے بعد پاکستان کو صحیح کمبی نیشن بنا کر اچھی کرکٹ کھیلنے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں صرف ٹیسٹ سیریز ڈرا کرنے کیلئے نہیں کھیلنا چاہئے بلکہ اسے جیتنا چاہئے، ماضی میں ہم بیٹنگ اور مائنڈ سیٹ کی وجہ سے بہت ساری سیریز ہار چکے ہیں جو ہم جیت سکتے تھے۔ مجھے اس قسم کی جارحانہ اور اس برانڈ کی ضرورت تھی جس کیلئے ہمیں جانا جاتا تھا، چاہتا ہوں کہ پاکستان سنجیدہ اننگز کھیلے کیونکہ ساری دنیا سیریز دیکھ رہی ہوگی، مجھے بابر اعظم اور حیدر علی سے ٹی 20 میں بہت سی توقعات وابستہ ہیں۔

شعیب اختر نے کہا کہ پاکستان کو ایک اچھی ٹیم کے طور پر سامنے آتا دیکھنا چاہتا ہوں اور خواہش ہے کہ جب فاسٹ باؤلر باہر جائیں تو وہ اپنی لائن اور لینتھ کے ساتھ باؤلنگ کریں، گلین میگراتھ، وسیم اکرم ، میلکم مارشل وہ باؤلر تھے جو جانتے تھے کہ کب ڈیک مارنا ہے۔

مزید :

کھیل -