بین الاقوامی ریڈ کراس کمیٹی نے افغانستان بھر میں نقل وحرکت روکدی

بین الاقوامی ریڈ کراس کمیٹی نے افغانستان بھر میں نقل وحرکت روکدی
بین الاقوامی ریڈ کراس کمیٹی نے افغانستان بھر میں نقل وحرکت روکدی

  

کابل(مانیٹرنگ ڈیسک)بین الاقوامی کمیٹی ریڈ کراس نے افغانستان بھر میں اپنے تمام عملے کی نقل و حرکت روک دی، جلال آباد میں دھماکوں اور فائرنگ کا نشانہ بننے والے اپنے دفتر کو بند کر دیا۔ ریڈ کراس کی بین الاقوامی کمیٹی کے جنوبی ایشیاءکے سربراہ جیکوس ڈی مائیو نے جنیوا سے جاری کئے جانیوالے ایک بیان میں کہا کہ افغانستان بھر میں ہر قسم کی نقل و حرکت روک دی گئی ہے۔ ریڈ کراس کی بین الاقوامی کمیٹی کا ایک بھی مندوب یا ملازم سڑکوں پر نقل و حرکت کرتا دکھائی نہیں دیا ۔ اس نے کہا کہ جلال آباد میں اپنے ذیلی دفتر کو بند کر دیا گیا ہے ۔ ریڈ کراس کی بین الاقوامی کمیٹی نے افغان تنازع میں بھرپور غیر جانبداری کا مظاہرہ کیا اور باور کیا جاتا ہے کہ اسے طالبان اور دوسرے باغی گروپوں کے ساتھ اس کے ورکنگ تعلقات کی وجہ سے حملوں سے تحفظ حاصل تھا، کسی بھی انتہا پسند گروپ نے بدھ کی رات کو کئے جانیوالے اس حملے جس میں ایک گارڈ دو گھنٹے کے حملے کے آغاز میں ہلاک ہوگیا ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

مزید : بین الاقوامی