بجٹ میں فروغ زراعت کے لئے خطیر رقم مختص کی جائے گی ،رانا اعجاز

بجٹ میں فروغ زراعت کے لئے خطیر رقم مختص کی جائے گی ،رانا اعجاز

  

راولپنڈی (اے پی پی )پارلیمانی سیکرٹری زراعت پنجاب رانا اعجاز احمد نون نے کہا ہے کہ 2015-16 کے بجٹ میں زرعی پیداوار بڑھانے اور فروغ زراعت کے لئے خطیر رقم مختص کی جا ئے گی اور کاشتکاروں کو ٹریکٹرز رعائتی نرخوں پر فراہم کرنے کے لئے 2 ارب روپے کی سبسڈی بھی شامل ہے۔ انہوں نے محکمہ زراعت پنجاب کو ہدایت کی ہے کہ کسانوں کی فلاح و جدید زرعی ٹیکنالوجی کی منتقلی کی سکیموں اور منصوبوں کے ثمرات کاشتکاروں کی دہلیز تک پہنچانے میں کوئی کسر اٹھا نہیں رکھی جائے۔انہوں نے کہا کہ پنجاب ایریگیٹد ایگریکلچرل پروڈکٹیوٹی امپروومنٹ پراجیکٹ (PIPIP) کے تحت 21249.997 ملین روپے کی خطیر رقم مختص کی گئی ہے جس کے تحت 1 لاکھ 20 ہزار ایکڑرقبہ پر ہائی ایفیشنسی ایریگیشن سسٹم کی تنصیب، 7 ہزار کھالا جات کی اصلاح، 2 ہزار ایریگیشن سکیموں کا قیام، 3 ہزار لیزر یونٹس سمیت کاشتکاروں کو تربیت بھی دی جائے گی۔ علاوہ ازیں140-150 ہارس پاور کے 100 نئے بلڈوزرز کی خریداری کے لئے بھی 2015-16 کے آمدہ بجٹ میں خطیر رقم مختص کی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کاشتکاروں کوجدید زرعی آلات نہایت شفاف اور فول پروف طریقہ کار سے درخواستوں کی وصولی اور چھانٹی کے عمل کے بعد متعلقہ ضلع کے ڈی سی او صاحبان کی نگرانی میں قرعہ اندازی کے بعد فراہم کیے جاتے ہیں۔مال نیوٹریشن، دالیں، سبزیات (ٹنل اور اوپن فیلڈ)، آم، ترشاوہ، اور امرود سے پھل کی مکھی کے تداررک کے لئے 227.610 ملین روپے کی لاگت سے منصوبے جاری ہیں۔ جو کہ حکومت پنجاب کے کسانوں کو جدید ٹیکنالوجی سے روشناس کرانے میں اہم کردار ادا کر رہی ہے۔

مزید :

کامرس -