کرپشن کیخلاف مخبری کرنیوالوں کا تحفظ وزیراعظم نے مسودہ قانون کی منظوری دیدی

کرپشن کیخلاف مخبری کرنیوالوں کا تحفظ وزیراعظم نے مسودہ قانون کی منظوری دیدی
کرپشن کیخلاف مخبری کرنیوالوں کا تحفظ وزیراعظم نے مسودہ قانون کی منظوری دیدی

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) ملک بھر میں بدعنوانی پر قابو پانے کی کوششوں کے سلسلہ میں نیب نے ایک قانونی مسودہ تیار کر کے حکومت کو پیش کیا ہے جس میں کرپشن کے خلاف آواز اٹھانے کیلئے تیار افراد کو تحفظ فراہم کرنے کی بات کی گئی ہے۔ مسودہ قانون کی ’’دی نیشن‘‘ کو حاصل ہونے والی ایک کاپی کے مطابق اس بل میں سرکاری ، انتظامی حکام کی کرپشن یا غلط اقدامات کو منکشف کرنے والوں کی حوصلہ افزائی کی گئی ہے۔

کرپشن کیخلاف مخبری کرنیوالے ممکنہ طور پر زیادہ تر حکومتی اداروں کے ملازمین ہوں گے، یہ بل ایماندار لوگوں اور دوسروں کی بدعنوانیوں کا پردہ چاک کرنے والوں کو حوصلہ فراہم کرے گا، مجوزہ قانون کے تحت ان الزامات کا تجزیہ کیاجائے گا اور تحقیقات کے بعد فوری کارروائی کی جائیگی، ذرائع کے مطابق چیئرمین نیب نے جنوری میں قانون ڈویڑن سے رابطہ کر کے رشوت خوری، اقربا پروری، اختیارات کے غلط استعمال اور بے ضابطگیوں کے حوالے سے تحفظات سے آگاہ کیا تھا اور اس حوالے سے قانون سازی پر زور دیا تھا، وزیراعظم نے ’’ مخبروں کے تحفظ کے بل‘‘ کے مسودے کی منظوری دیدی ہے، یہ بل اب وفاقی کابینہ کے سامنے پیش کیا جائے گا اور کابینہ سے منظوری کے بعد قومی اسمبلی میں پیش کی جائیگا۔

اس قانون کے تحت بدعنوانی کے انکشاف کرنے والے کو اپنے اس عمل کی بنا پر کسی ذریعے سے پریشان نہیں کیا جائے گا، قومی مفاد میں خلاف قانون کارروائیوں کے انکشاف کرنے والے کو معلومات غلط ثابت ہونے پر کسی سزا اور انتقامی کارروائی سے بھی محفوظ رکھنے کی تجویز دی گئی ہے، مسودہ قانون میں بدعنوانی کا ثبوت پیش کرنے والے اداروں کے ملازمین کو یہ یقین بھی دلایا گیا ہے ادارے کے سربراہ ان کی خواہش پر ان کے نام سے سامنے نہ لانے کے پابند ہوں گے۔

مزید :

اسلام آباد -