سانحہ ڈسکہ :آٹھویں روز بھی وکلاءنے ہڑتال کی اور احتجاج کیا

سانحہ ڈسکہ :آٹھویں روز بھی وکلاءنے ہڑتال کی اور احتجاج کیا
سانحہ ڈسکہ :آٹھویں روز بھی وکلاءنے ہڑتال کی اور احتجاج کیا

  

لاہور(نامہ نگار)سانحہ ڈسکہ کے خلاف وکلاءنے آٹھویں روز بھی ہڑتال کی ،لاہور میں وکلاءکی جانب سے ایوان عدل میں اجلاس منعقد کیا گیا جس کے بعدپی ایم جی چوک میں احتجاجی مظاہرہ بھی کیا گیا ۔وکلاءکا کہنا تھا کہ ملزمان کوسزا ءہونے تک ہرہفتے( پیر) کے دن وکلاءہڑتال کیاکریں گے۔تفصیلات کے مطابق ڈسکہ میں ایس ایچ او شہزاد وڑائچ کی طرف سے دو وکلاءکو فائرنگ کرکے قتل کرنے کے خلاف وکلاءکی طرف سے گزشتہ بھی ہڑتال کی گئی تاہم فوری نوعیت کے متقاضی مقدمات کے علاوہ وکلاءعدالتوںمیں پیش نہیں ہوئے ۔اجلاس لاہور بارایسوسی ایشن کے قائم مقام صدر جہانگیر بھٹی کی زیرصدارت منعقد ہوا جس میں فیصلہ کیا گیا کہ جب تک شہزاد وڑائچ کو سزا نہیں دی جاتی وکلاءہر پیر کے دن ہڑتال کیاکریں گے اور احتجاجی کیمپ لگائیں گے، اجلاس میں ایک کمیٹی تشکیل دینے کا بھی فیصلہ کیا گیا جو مذکورہ کیس کی نگرانی کرے گی اور وکلاءکو تفتیش سے آگاہ رکھے گی،اجلاس سے ضیاءالرحمن،دلشاد بیگ، شرافت علی، ایم ایچ شاہین،محمد اکرم اور سیکرٹری بار ادیب اسلم بھنڈر نے بھی خطاب کیا،اس موقع پر سینئر ایڈووکیٹ مدثر چودھری، مرزا حسیب اسامہ ، ارشاد گجر اورمجتبی چودھری نے بھی شرکت کی ۔بعد ازاں وکلاءنے پی ایم جی چوک میں احتجاجی کیمپ لگایا ،جہاںحکومت کے خلاف نعرے بازی بھی کی گئی۔

مزید :

لاہور -