برما نے ایک بار پھر مسلمانوں پر ظلم کا پہاڑ گرادیا،پکڑی گئی کشتی میں سوار مسلمانوں کی ایسی حالت کر دی کہ جان کر دل خون کے آنسو روئے

برما نے ایک بار پھر مسلمانوں پر ظلم کا پہاڑ گرادیا،پکڑی گئی کشتی میں سوار ...
برما نے ایک بار پھر مسلمانوں پر ظلم کا پہاڑ گرادیا،پکڑی گئی کشتی میں سوار مسلمانوں کی ایسی حالت کر دی کہ جان کر دل خون کے آنسو روئے

  

نیپجیدا (نیوز ڈیسک) برما میں ناقابل بیان ظلم و جبر کے شکار روہینجا مسلمان جان بچانے کے لئے بے یارومددگار کھلے سمندروں میں نکلنے پر مجبور ہوگئے ہیں لیکن برمی حکام ہر صورت ان کی جان کے درپے ہیں۔

برما کے جنوبی ساحل کے قریب حکام نے 700 روہینجا مسلمانوں سے بھری کشتی پکڑلی ہے جس کے بارے میں حکام کا کہنا ہے کہ اسے بنگلا دیش بھیجا جائے گا لیکن نیوی کے ایک سینئر افسر کا کہنا ہے کہ ابھی کچھ معلوم نہیں کہ انہیں کہاں بھیجا جائے گا۔ کشتی میں 608مرد، 74 خواتین اور 45 بچے سوار ہیں جو گزشتہ چار ماہ سے سمندر میں بھٹک رہے تھے۔ انہیں برما سے نجات کے بہانے انسانی سمگلروں نے تین کشتیوں میں بٹھایا لیکن بعدازاں کھلے سمندر میں جاکر ایک ہی کشتی میں ٹھونس کر لہروں کے حوالے کردیا۔ بدترین مصائب کے شکار ان مسلمانوں میں سے 50 سے زائد ہلاک ہوگئے جبکہ باقی برمی حکام کی قید میں ہیں اور ان کے مستقبل اور زندگی کے بارے میں کچھ بھی واضح نہیں۔

ایک اندازے کے مطابق برما میں نسل کشی کے شکار چار ہزار سے زائد روہینجا مسلمان جان بچانے کے لئے کھلے سمندر کی طرف نکل چکے ہیں اور ان میں سے اب تک درجنوں بھوک، بیماری اور موسمی سختیوں کی وجہ سے ہلاک ہوچکے ہیں، جبکہ کوئی بھی ملک انہیں اپنی سرحد میں داخل ہونے کی اجازت دینے پر تیار نہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -