بیلٹ باکس چوری کرنے کا الزام ، تحریک انصاف کے رہنماءاور صوبائی وزیر علی امین گنڈا پور گرفتار

بیلٹ باکس چوری کرنے کا الزام ، تحریک انصاف کے رہنماءاور صوبائی وزیر علی امین ...
بیلٹ باکس چوری کرنے کا الزام ، تحریک انصاف کے رہنماءاور صوبائی وزیر علی امین گنڈا پور گرفتار

  

ڈیرہ اسماعیل خان ( مانیٹرنگ ڈیسک ) پاکستان تحریک انصاف کے رہنماءاور خیبرپختونخواہ کے صوبائی وزیر مال علی امین گنڈا پور نے پولیس کو گرفتاری دے دی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق بلدیاتی انتخابات میں دھاندلی کرنے اور بیلٹ باکس چوری کرنے کے الزام میں آئی جی خیبرپختونخواہ ناصر درانی نے صوبائی وزیر علی امین گنڈا پور کو گرفتار کرنے کے احکامات دیے تھے ۔ احکامات پر عمل کرنے کے لیے ڈی پی او کی سربراہی میں پولیس ٹیم تحریک انصاف کے رہنماءکو گرفتار کرنے کے لیے ان کے گھر پہنچی لیکن انہوں نے گرفتاری دینے سے انکار کر دیا تھا ۔ علی امین کی جانب سے موقف اپنایا گیا تھا کہ انہیں ضمانت لینے کا حق حاصل ہے اور وہ گرفتاری نہیں دیں گے ۔

گرفتاری کے بعد علی امین گنڈا پور کا کہنا تھا  کہ انہوں نے پارٹی چیئرمین عمران خان کی ہدایت پر گرفتاری دی ہے ۔انہوں نے مزید بتایا کہ عمران خان اور ان کی 20 منٹ تک ٹیلیفونک گفتگو ہوئی ہے جس کے بعد انہوں نے گرفتاری دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔ ڈی پی او نوشہرہ نے بتایا  کہ علی امین گنڈا پور کو  ان کے گھر سے گرفتار کیا گیا ہے اور گرفتاری میں تاخیر ان کے گھر کے باہر موجود کارکنان کی وجہ سے ہوئی ہے۔ڈی پی او نے بتایا کہ علی امین گنڈا پور کی جانب سے کارکنان کو اعتماد میں لینے کے بعد انہوں نے گرفتاری پیش کی اور  اب انہیں تھانہ صدر منتقل کیا جا رہا ہے ۔ ذرائع کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ صوبائی وزیر پولیس وین کی بجائے ذاتی گاڑی میں پولیس کے ساتھ روانہ ہوئے ہیں اور انہیں ہتھکڑی بھی نہیں لگائی گئی۔

یاد رہے دوسری جانب عوامی نیشنل پارٹی کے رہنماءمیاں افتخار کو قتل کا الزام لگا کر خیبرپختونخواہ پولیس نے ہتھکڑی لگا کر گرفتار کیا تھا جبکہ مقتول نوجوان کے والد کی جانب سے انہیں بے قصور قرار دیا گیا تھا ۔ اس بیان کے بعد پولیس نے میاں افتخار کا نام مقدمے سے خارج کرنے کا فیصلہ بھی کیا تھا ۔ لیکن صوبائی وزیر کو ان کی ذاتی گاڑی میں تھانہ جانے کی اجازت دی گئی ہے ۔

مزید :

پشاور -اہم خبریں -