’تمہارا یہ کھیل کھیلنے کیلئے ہمارے پاس وقت نہیں‘ چین نے امریکیوں کی چالاکی دنیا کے سامنے بے نقاب کردی، ایسی کھری کھری سنادیں کہ پوری دنیا کو دھمکیاں دینے والا امریکا اپنا سا منہ لے کررہ گیا

’تمہارا یہ کھیل کھیلنے کیلئے ہمارے پاس وقت نہیں‘ چین نے امریکیوں کی چالاکی ...
’تمہارا یہ کھیل کھیلنے کیلئے ہمارے پاس وقت نہیں‘ چین نے امریکیوں کی چالاکی دنیا کے سامنے بے نقاب کردی، ایسی کھری کھری سنادیں کہ پوری دنیا کو دھمکیاں دینے والا امریکا اپنا سا منہ لے کررہ گیا

  


بیجنگ (نیوز ڈیسک) امریکا کی جانب سے کی جانے والی سازشوں کا کرارا جواب دیتے ہوئے چین نے امریکی حکام کو سرد جنگ ذہنیت کا غلام قرار دے دیا ہے اور یہ بھی واضح کر دیا ہے کہ چین امریکا کی ہدایت کاری میں بنائی گئی کسی ہالی ووڈ فلم کا کردار نہیں بن سکتا، جو اس کے اشاروں پر ناچتا پھرے۔

اخبار دی گارڈین کے مطابق گزشتہ ہفتے امریکی وزیر دفاع ایشٹن کارٹر نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ چین اپنے گرد ایک عظیم دیوار تعمیر کرکے خود کو دنیا سے علیحدہ کررہا ہے۔ انہوں نے یہ بیان ایک ایسے موقع پر دیا کہ جب امریکا چین کو بحیرہ جنوبی چین میں حدود سے تجاوز کا الزام دیتے ہوئے خود اس علاقے میں اپنی عسکری طاقت بڑھانے کی کوشش کر رہا ہے۔

’ہمارے ملک میں اسلام کیلئے کوئی جگہ نہیں‘ وہ ملک جس کے وزیراعظم نے اعلان کردیا، دنیا بھر کے مسلمانوں کو آگ بگولا کردیا

چینی وزارت خارجہ کی نمائندہ ہواچونینگ نے گزشتہ روز امریکی وزیر دفاع کے بیان کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ بیان ایشیاءپیسفک میں مزید افواج تعینات کرنے کے امریکی منصوبے کو چھپانے کی ایک کوشش ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ امریکا میں کچھ ایسے لوگ ہیں کہ جو بظاہر تو اکیسویں صدی میں رہتے ہیں لیکن ان کے دماغ اب بھی سرد جنگ کے دور میں پھنسے ہوئے ہیں۔ امریکی سازشوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے انہوں نے دوٹوک الفاظ میں کہا کہ چین اپنی خود مختاری اور سلامتی کے خلاف کئے جانے والے اقدامات سے بے خبر نہیں ہے اور ان سے نمٹنے کے لئے کوئی بھی قدم اٹھاسکتا ہے۔

واضح رہے کہ امریکی وزیر دفاع نے جمعہ کے روز یو ایس نیول اکیڈمی میں خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکا بحیرہ جنوبی چین کے علاقے میں چینی اقدامات پر تشویش رکھتا ہے، جہاں اس نے مصنوعی جزیرے تعمیر کرکے تقریباً تمام علاقے پر اپنی ملکیت دعوٰی مضبوط کرنے کی کوشش کی ہے۔ انہوں نے چینی اقدامات کو بنیادی اصولوں کی خلاف ورزی قرار دیا اور کہا کہ امریکا اس صورتحال میں دوسری طرف نہیں دیکھ سکتا۔ چین نے نہ صرف امریکا کے اس مﺅقف کو رد کیا بلکہ بحیرہ جنوبی چین سے متعلق امریکا کی مکارانہ پالیسی کی حقیقت بھی واشگاف الفاظ میں بیان کر دی۔

مزید : بین الاقوامی