اورنج ٹرین کیخلاف دائر مختلف درخواستوں پر ڈی جی محکمہ ماحولیات طلب

اورنج ٹرین کیخلاف دائر مختلف درخواستوں پر ڈی جی محکمہ ماحولیات طلب

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہورہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس عابد عزیز شیخ کی سربراہی میں قائم ڈویژن بینچ نے اورنج لائن میٹرو ٹرین کیخلاف دائر مختلف درخواستوں پر ڈی جی محکمہ ماحولیات جاوید اقبال کو طلب کرتے ہوئے مزید سماعت آج تک ملتوی کر دی ہے ۔اورنج لائن ٹرین منصوبے کے خلاف ایک ہی نوعیت کی مختلف درخواستوں کی سماعت کے دوران درخواست گزاروں کے وکیل اظہر صدیق نے اعتراض اٹھایا کہ پیپرا قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کام کرنے کا ٹھیکہ 4 کنٹریکٹرز اور 13 سب کنٹریکٹرز کو دے دیا گیا ہے۔، درخواست گزار کے وکیل نے نشاندہی کی کہ نیسپاک کووزیراعلی نے فزیبلٹی رپورٹ تبدیل کرنے کا اختیار دیدیا، درخواستوں پر مزید سماعت کل بھی جاری رہے گی۔درخواست گزار کے وکیل کا کہنا تھا کہ اورنج لائن ٹرین منصوبے کے دوران 25 سے زائد اموات ہوئیں،جبکہ ایل ڈی اے کی جانب سے عدالت میں اموات کے غلط اعداد و شمار پیش کیے گئے، انہوں نے مزید بتایا کہ چائنیز کمپنی نے اورنج لائن ٹرین منصوبے کے لیے پہلے 230ارب لاگت کی رپورٹ دی تھی، ۔لیکن پھر میں اضافہ کر دیا گیا۔پیپرا قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کام کرنے کا ٹھیکہ 4 کنٹریکٹرز اور 13 سب کنٹریکٹرز کو دے دیا گیا ہے، ۔اورنج لائن ٹرین کا معاہدہ متعلقہ کمپنی کو میرٹ سے ہٹ کر شفافیت کی بنیاد پر نہیں دیاگیا،۔ نیسپاک کووزیراعلی نے فزیبلٹی رپورٹ تبدیل کرنے کا اختیار دیدیاچنانچہ عدالت اسکا نوٹس لیتے ہوئے کاروائی کرئے جس پر فاضل عدالت نے عدالتی وقت ختم ہونے پر مزید سماعت آج تک ملتوی کر دی۔

مزید : علاقائی