ملتان سمیت میپکو ریجن میں توانائی کا بدترین بحران، بجلی چند گھنٹوں کی مہمان بن گئی، مظاہرے شروع

ملتان سمیت میپکو ریجن میں توانائی کا بدترین بحران، بجلی چند گھنٹوں کی مہمان ...

ملتان،شجاعباد،رحیم یار خان،ڈیرہ غازیخان،قصبہ بصیرہ،میلسی،جیٹھہ بھٹہ،سیت پور،اوچ شریف(سٹاف رپورٹر،نمائندگان)ملک بھر کی طرح ملتان سمیت جنوبی پنجاب کے تمام بڑے چھوٹے شہروں اور قصبات و دیہات میں بجلی کی بدترین،طویل اور غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے باعث کاروبار تباہ جبکہ روز مرہ زندگی کے تمام معمولات درہم برہم ہوکر رہ گئے ہیں لوڈشیڈنگ کے ستائے لوگوں نے احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ بھی شروع کردیا ہے۔ملتان سے سٹاف رپورٹر کے مطابق  ملتان سمیت میپکو ریجن میں لوڈشیڈنگ کا بدترین بحران جاری ہے‘ نواحی علاقوں میں دورانیہ 18گھنٹوں سے کم نہیں ہو سکا‘ ملتان شہر کے بعض فیڈرز سے6گھنٹے اور دیہی فیڈرز سے 8گھنٹے بجلی سے زائدبجلی بند کی جارہی ہے‘ گردونواح کے دیہات میں تو گھمبیر صورتحال ہے ‘ بجلی سارا دن صرف چند گھنٹے کیلئے آتی ہے۔ملتان سمیت میپکو ریجن میں وولٹیج میں کمی کا بحران بدترین ہو گیا ہے‘خاص طور پر نواحی علاقوں کے مکین شدید متاثر ہیں ‘وولٹیج اتنے کم ہیں کہ فریج‘واٹر پمپ اور دیگر آلات ٹھیک طریقے سے استعمال نہیں ہو سکتے ‘ وولٹیج کی کمی بیشی سے الیکٹرانک اشیا جل رہی ہیں صارفین کا احتجاج جاری ہے۔ گزشتہ روز بھی دن اور رات کے اوقات میں ہر 20منٹ کے بعد ٹرپننگ ہوتی رہی جس سے متعدد صارفین کے آرام میں خلل پڑا جبکہ رات لوگوں نے جاگ کر گزاری۔شجاعباد سے نمائندہ خصوصی کے مطابق الفرید فیڈر شجاع آباد میں بجلی کی طویل بندش نے لوگوں کا جینا محال کر دیا ہے شدید گرمی میں بوڑھے بچے بے ہوش ہو گئے اس بجلی کی طویل بندش کے خلاف اہل علاقہ نے ایس ڈی او میپکو سب ڈویثزن کے خلاف شدید احتجاج کیا ہے ۔رحیم یار خان سے بیورو نیوز کے مطابق پاکستان مسلم لیگ فنکشنل پنجاب کے صوبائی چیف آرگنائزررئیس خالق دادچاچڑ ایڈووکیٹ نے کہاکہ محکمہ موسمیات کے مطابق ایک بارپھرگرمی کی لہرمیں اضافہ کاامکان ہے رحیم یارخان40.2سینٹی گریڈ ریکارڈ کیاگیا بجلی غائب ہونے سے کاروبارتباہ وبرباد ہوچکے ہیں جبکہ گرمی کی شدت میں اضافہ کے ساتھ ہی لوڈشیڈنگ کادروانیہ بھی بڑھ گیاہے جس سے عوام کوپانی کے حصول میں بھی مشکلات کاسامناہے وزیراعظم،وزیر اعلیٰ پنجاب نوٹس لیں۔ڈیرہ غازیخان سے نمائندہ خصوصی کے مطابق ڈیرہ غازیخان میں یونین کونسل نظام آباد کے محلہ نورنگ آباد کے علاقہ مکینوں کاتین دن سے ٹرانسفارمر نہ ہو نے، بجلی کی طویل اور غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ پر صبر کا پیمانہ لبریز ہوا تو وہ احتجاج کرنے کیلئے واپڈا کمپلیکس پہنچ گئے اور مین گیٹ کے سامنے ٹائر جلا کر طویل اور غیر اعلانیہ بجلی کی بندش کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور واپڈا آفس کے اندر داخل ہو نے کی کوشش کی تو وہاں پر موجود سیکیورٹی گارڈ نے مظاہرین کو منتشر کر نے کے لئے مبینہ طور پربندوق تان لی احتجاجی مظاہرین محمد صدیق ،عبد الغفار،محمد ثقلین ،حمزہ خان ،احمد شاہ ،سیف اللہ کھلول ،ستار چانڈیہ و دیگر کا کہنا تھا کہ گذشتہ تین دنوں سے ان کے علاقوں میں بجلی کی بندش اور باربار ٹرپنگ سے ان کی لاکھوں روپے مالیت کی الیکٹرونکس اشیاء خراب ہوچکی ہیں ۔مظاہرین نے دھمکی دی کہ اگر فوری طور پر ان علاقوں میں ٹرانسفارمر کی تنصیب اور غیراعلانیہ بندش ختم نہ کی گئی تو وہ احتجاج کا دائرہ وسیع کرتے ہوئے واپڈا حکام کو دفتروں سے باہر نہیں نکلیں دیں گے۔بعدازاں وپڈا حکام کی طرف سے ٹرانسفارمر کی شام تک تنصیب ہو نے پر احتجاجی مظاہرین پر امن طور پر منتشر ہو گئے ۔اربن یونین کونسل نمبر سترہ کی آبادیوں عبداللہ ٹاؤن کا ٹرانسفارمر تین روز پہلے جل گیا تھا جسے مرمت نہ کیا جا سکا شدید گرمی اور حبس کے باعث علاقہ مکینوں کو اذیت کا سامان کرنا پڑا تین دن بعد بھی ٹرانسفارمر ٹھیک نہ کرنے پر علاقہ مکینوں نے ریلوے پھاٹک احتجاجا بند کردیا۔مظاہرین شیخ ستار ، سید حسنین بادشاہ ، خرم شاہ ، ملک فیاض حسین ، نجف علی ، شیخ عمران ، شیخ عبدالغفار ، شیخ بشیر ، ابرار بیڑو، حیدر علی ، شیخ عثمان ثانی ، سلطان خان ، الیاس ، حنیف خان ، وغیرہ نے ایس ای واپڈا اور ایکسین واپڈا سے مطالبہ کیا کہ عبداللہ ٹاؤن کا ٹرانسفارمر فوری طور پر مرمت کر کے بجلی بحال کی جائے ۔قصبہ بصیرہ سے نامہ نگار کے مطابق ما ہ صیام کی آمد سر پر ہے مگر قصبہ بصیرہ و گردونواح میں بجلی کی طویل،غیر اعلانیہ اور اذیت ناک لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ بیس گھنٹے برقرار ہے۔گرمی اور لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے بچے ، بزرگ اور خواتین بلبلا اٹھے۔ شہریوں کی بڑی تعداد نے واپڈا سب ڈویژن کرمداد قریشی کی خلاف احتجاج کیا اور حکومت اور واپڈا کو جھولیاں اٹھا اٹھا کر بد دعائیں دیں۔۔ احتجاج میں شامل شہریوں محمد عمران،آصف چوہان،محمد شاکر،محمد عدنان، شیخ شعیب،اعجاز حسین ،اللہ بخش و دیگر کا کہنا تھا کہ لائن سپرنٹنڈنٹ محمد نعیم اور بصیرہ فیڈر پر تعینات لائن مین ہمارے حصے کی بجلی فروخت کرتے ہیں ۔لوڈ شیڈنگ کی وجہ پوچھنے کے لیے ایل ایس سے رابطہ کیا جاتا ہے تو وہ بجلی فراہم کرنے کے عوض بھاری رشوت طلب کرتے ہیں۔جبکہ گرڈ اسٹیشن کا عملہ تو فون سننا بھی گوارہ نہیں کرتا۔اس سلسلے میں جب ایل ایس محمد نعیم سے رابطہ کیا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ میرے اوپر لگایا گیا بجلی فروخت کرنے کا الزام بے بنیاد ہے۔میلسی سے نمائندہ پاکستان کے مطابق محلہ صدیق اکبر میں بجلی کی بندش کے خلاف شہریوں نے احتجاجی مظاہرہ کیامظاہرین نے ڈی ایس پی چوک میں ٹائرجلاکرمیپکوکے خلا ف نعرے بازی کی مظاہرین نے کہاکہ محلہ میں پینے کے پانی کابحران پیداہوچکاہے اورگرمی کی وجہ سے اہل محلہ نڈھال ہوگئے انہوں نے بجلی کی بحالی کامطالبہ کیاہے ۔جیٹھہ بھٹہ سے نامہ نگار کے مطابق گڑھی اختیار خان اور اسکے نواحی علا قوں میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 16سے 18گھنٹے کردیا گیا ہے ۔علاقہ کے مکینوں جلیل احمد،اختر خان،نوید احمد،سجاد احمد،سلطان محمود کوریجہ،عاشق حسین عباسی اور زبیر احمد نے ارباب اختیار سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔سیت پور سے نمائندہ پاکستان کے مطابق سیت پور کے عوام سے سوتیلی ماں جیسا سلوک کر تے ہوئے ایس ڈی او واپڈا خیر پور سادات طویل دورانیہ کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کو معمول بنایا شدید گرمیکے اس موسم میں طویل دورانیہ کی لوڈ شیڈنگ کی وجہ سیت پور کے عوام تڑپتے رہے۔سیاسی اور سماجی حلقوں نے ایس ڈی او کے اس رویہ کے خلاف شدید احتجاج کیا ہے ۔اوچ شریف سے نمائندہ پاکستان کے مطابق گورنمنٹ شیڈول لوڈشیڈنگ 6گھنٹے،لیکن واپڈا لوڈشیڈنگ مسلسل 20گھنٹے بجلی بند اور لوڈشیڈنگ کا دورانیہ20سے22گھنٹے معمول بن گیا۔گرڈ سے بجلی چلتی ہے تو واپڈا اہلکار موضع چک کہیل ،گمانی ،بیٹ احمد کچی لعل ،کی جمپر کو اتار کربجلی بند کر دیتے ہیں ،واپڈا ذرایعے سے معلوم ہوا ہے کہ واپڈا کے اعلیٰ آفسران کے حکم پرایس ڈی او چوہدری خالد، نے من مرضی کی ہوئی ہے صبح 8سے لیکر 5.30بجے شام تک بجلی بند کردیتے ہیں اور رات 9.30سے لیکر صبح 6بجے تک بجلی بند کی جاتی ہے ۔اہل علاقہ سردار اللہ ڈتہ بڈانی ،غلام شبیر کلہ جنرل کونسلر یونین کونسل صادق آباد، اللہ ڈتہ مجاور ، قاری محمد یوسف کہیل ،افضل خان بڈانی ،حاجی عبدالغفار بڈانی ،محمد ابراھیم کریانہ مر چنٹ،ملک محمد اکرم ببر، محمد ارشد خان مجاہد محمد فاروق بڈانی،کی قیادت میں درجنوں لوگوں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ فرعون چوہدری خالد ایس ڈی اوکے خلاف کاروائی کر کے اس کا تبادلہ کیا جائے اور مطابق گورنمنٹ شیڈول بجلی بحال کرائی جائے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر