چیمبر کی سطح پر وفود کے تبادلوں سے تجارتی مواقع بڑھ سکتے ہیں،صدر راولپنڈی چیمبر

چیمبر کی سطح پر وفود کے تبادلوں سے تجارتی مواقع بڑھ سکتے ہیں،صدر راولپنڈی ...

  

راولپنڈی (کامرس ڈیسک)تاجکستان کی تاجر برادری پاکستان میں ابھرتے ہوئے تجارتی مواقعوں سے فائدہ اٹھائے۔ خشکی سے محصور ملکوں افغانستان، وسطی ایشائی ملکوں تاجکستان، ترکمانستان، قزاقستان، ازبکستان اور کرغستان کو تجارت اور راہداری کے لیے قابل عمل راستہ پاکستان ہی ہے سی پیک کے تناظر میں پاکستان میں پرکشش تجارتی مواقع موجود ہیں چیمبر کی سطح پر وفود کے تبادلوں کے ذریعے تجارتی مواقع بڑھائے جا سکتے ہیں ٹیکسٹائل، معدنیات اور تعمیرات کے شعبوں میں دو طرفہ تجارت بڑھانے اور مشترکہ منصوبے لگانے کے وسیع مواقع موجود ہیں ان خیالات کا اظہار راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے صدر راجہ عامر اقبال نے دوشنبے تاجکستان میں چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ دنیا کی آدھی آبادی جنوبی ایشیاء وسطی ایشیاء میں رہتی ہے پاکستان افغانستان اور وسطی ایشیا ملکوں کے درمیان روڈ اور ریلوے نیٹ ورک کو تیزی کے ساتھ بہتر بنانے کی ضرورت ہے اس کے علاوہ دوطرفہ ،علاقائی اور باہمی تجارت میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنے کی بھی اشد ضرورت ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان ، افغانستان اور وسطی ایشیائی ملکوں کے ساتھ تجارتی اور نئے کاروباری مواقع تلاش کرنے اور ان ملکوں کے درمیان تجارت کے فروغ کے لیے کاروبار آسان کرنے کی بھی ضرورت ہے اس موقع پر یو یس ایڈ کے علاقائی تجارت کے فروغ کے ادارے USAID-PREIAکے چیف پارٹی ڈونلڈ کارٹر، تاجکستان میں پاکستان کے سفیر طارق سومرو اور تاجکستان کے چیمبر کے، چیئر مین اراکین اور حکومتی عہدیدار بھی موجود تھے۔

مزید :

کامرس -