قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ، سی پیک سکیورٹی مزید سخت ، کلبھوشن کیس میں بھرپور دفاع کرنے کا فیصلہ ، وزیر اعظم سے آرمی چیف کی ملاقات

قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ، سی پیک سکیورٹی مزید سخت ، کلبھوشن کیس میں ...

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک،صباح نیوز،آن لائن)وزیر اعظم کی زیر صدارت قومی سلامتی کے حوالے سے اعلیٰ سطح کا اجلاس ہواجس میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سمیت وفاقی وزراء نے بھی شرکت کی۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ عالمی عدالت انصاف میں کلبھوشن یادیوکیس کا بھرپور دفاع کیا جائیگا اور آپریشن ردالفساد کو جاری رکھنے ، سی پیک کی سکیورٹی کو مزید سخت کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔اجلاس میں عالمی عدالت انصاف میں ریاض سمٹ سمیت قومی سلامتی کے امور پر بھی غور کیاگیا۔اجلاس میں وفاقی وزرا چودھری نثار،خواجہ آصف، اسحق ڈار، مشیر سرتاج عزیز کے علاوہ ڈی جی آئی ایس آئی، ڈی جی ایم آئی نے بھی شرکت کی۔قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس وزیر اعظم محمد نواز شریف کے زیر صدارت بدھ کو ہوا،جاری کی گئی تفصیلات کے مطابق قومی سلامتی کمیٹی نے ملک کی داخلی اور خارجی سیکورٹی صورتحال پر تفصیل کے ساتھ تبادلہ خیال کیامشرقی اور مغربی سرحدوں کی صورتحال بھی زیر غور آئی اجلاس میں مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے کشمیری عوام پر ڈھائے جانے والے مظالم پر تشویش کا اظہار کیا گیا اور کشمیری عوام کی اخلاقی اور سفارتی حمایت جاری رکھنے کا عزم ظاہر کیا گیا سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں سی پیک منصوبوں کی سیکورٹی پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا اجلاس میں وزیر دفاع خواجہ محمد آصف، وزیر خزانہ اسحاق ڈار، وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان، وزیر منصوبہ بندی و ترقی احسن اقبال، وزیر اعظم کے خارجہ امور کے مشیر سرتاج عزیز ، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات ، چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ، چیف آف نیول سٹاف ایڈمرل محمد ذکاء اللہ، چیف آف ایئر سٹاف ایئر چیف مارشل سہیل امان ، ڈائریکٹر جنرل آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل نوید مختار، ڈائریکٹر جنرل ایف ڈبلیو او لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل اور قومی سلامتی کے مشیر لیفٹیننٹ جنرل (ر) ناصر خان جنجوعہ نے بھی شرکت کی اس سے قبل آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے وزیر اعظم نواز شریف سے ملاقات کی اور پاک فوج کی آپریشنل تیاریوں ،قومی سلامتی اور سکیورٹی صورتحال سمیت اہم قومی امور پر تبادلہ خیال کیا گیا جبکہ آرمی چیف نے وزیر اعظم کو دہشت گردوں کیخلاف جاری آپریشن ردالفساد پر بھی بریفنگ دی ،وزیر اعظم آپریشن کی کامیابیوں پر اطمینان کا اظہار کیا۔میڈیا رپورٹ کے مطابق بدھ کے روز اجلاس کے بعد آرمی چیف نے وزیر اعظم ہاؤس میں وزیر اعظم سے ون ٹو ون ملاقات کی ،اس ملاقات میں بھارتی جاسوس کلبھوشن کے معاملے پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا جبکہ ملاقات کے دوران آرمی چیف نے وزیر اعظم کو آپریشن ردالفساد کے حوالے سے بھی آگاہ کیا جس پر وزیر اعظم نے دہشت گردی کے خاتمے کیلئے آپریشن ردالفساد کی کامیابیوں پر اطمینان کا اظہار کیا اور امن کے قیام کیلئے مسلح افواج کی قربانیوں کو سراہا۔

قومی سلامتی کمیٹی

مزید :

صفحہ اول -