سندھ اسمبلی کی پارلیمانی کمیٹی نے سی ای او کے الیکٹرک کو طلب کر لیا

سندھ اسمبلی کی پارلیمانی کمیٹی نے سی ای او کے الیکٹرک کو طلب کر لیا

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سندھ اسمبلی کی پارلیمانی کمیٹی نے کے الیکٹرک کے سی او کو تین دن مین کمیٹی کے سامنے پیش ہونے کی مہلت دیدی ہے ۔چیئرمین پارلیمانی کمیٹی جاوید ناگوری نے کہا ہے کہ سی ای او آئندہ اجلاس میں نہ آئے تو انہیں جیل بھی بھیج سکتے ہیں۔سندھ اسمبلی کی کے الیکٹرک سے متعلق پارلیمانی پارٹی کا اجلاس بدھ کو چیئرمین جاوید ناگوری کی صدارت میں منعقد ہوا ۔اجلاس میں کمیٹی کے ارکان شہریار مہر ،ساجد جوکھیو ،شاہینہ بلوچ ،خرم شیر زمان ،سیف الدین خالد اور کے الیکٹرک کے ڈپٹی ڈائریکٹر عبدالحمید بھٹی شریک ہوئے ۔کمیٹی نے کے الیکٹرک کے سی ای او کی اجلاس میں عدم شرکت پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ادارے کے سربراہ کی عدم موجود گی میں اجلاس بے مقصد ہے ۔اجلاس میں کمیٹی کے ارکان نے کے الیکٹر ک کے ڈپٹی ڈائریکٹر عبدالحمیدبھٹی کو بات کرنے کی اجازت نہیں دی اور موقف اختیار کیا کہ کے الیکڑک کے سی ای او کی عدم موجودگی کے باعث اجلاس نہیں چل سکتا جس پر اجلاس تین جون تک ملتوی کردیا گیا ۔کمیٹی کے سربراہ نے کہا کہ شرم آنی چاہیے کہ بجلی کا اتنا بڑا بحران ہے اور کے الیکٹرک کے حکام نے اسے سنجیدگی سے نہیں لیا۔ شہری بلبلا رہے ہیں اور کے الیکٹرک حکام مزے لینے میں مصروف ہیں۔آج کے اجلاس کو کے الیکٹرک حکام کی نااہلی کے نام کرتے ہیں۔ کے الیکٹرک کے آفسران آئندہ اجلاس میں اپنی ڈگریاں بھی ساتھ لائیں ہمیں ان کی اہلیت پربھی شک ہے ۔کمیٹی کے چیئرمین جاوید ناگوری نے کہا کہ شہر میں کے الیکٹرک کی غنڈا گردی چل رہی ہے ۔کتنی شرم کی بات ہے کہ کے الیکٹرک والے اس اجلاس میں نہیں آئے ۔ہم 17سوال لیکر آئے تھے کہ کے الیکٹرک والوں سے ان کا جواب لیں گے ۔تین دن کا انتظامیہ کو وقت دیتے ہیں کہ اس اجلاس کے سامنے پیش ہوں ۔اگروہ اجلاس میں نہیں آئے تو پھر ہم خود وہاں جائیں گے ۔ڈپٹی ڈائریکٹر کے الیکٹرک حمید بھٹی نے بتایا کہ اجلاس میں سی ای او کو ہی آنا تھالیکن کچھ ہم مصروفیات کی وجہ سے نہیں آسکے ہیں ۔شہریا رمہر نے کہا کہ کمیٹی انتظامیہ کے اس رویہ پر ان کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے چھ ماہ تک جیل بھی بھیج سکتی ہے۔نشاط محمد ضیاء قادری نے کہا کہ لوڈشیڈنگ کے باوجود صافین کو لاکھوں روپے کے بل بھیجے جارہے ہیں ۔عوام کے پیسوں پر کے الیکٹرک والے عیاشی کر رہے ہیں ۔بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے جاوید ناگوری نے کہا کہ کے الیکٹر ک شہر کے حالات خراب کرناچاہتی ہے ۔ہم شہریوں سے زیادتی براشت نہیں کریں گے ۔اگر سی ای او کے الیکٹرک 3تاریخ کو اجلا س میں نہیں آئے تو ان کو 6ماہ کی سزا بھی دی جاسکتی ہے ۔سزا سے بچنے کیلئے سی ای او کو تین دن کا وقت دیاہے کہ وہ آکر سترہ سوالوں کے جواب دیں ۔انہوں نے کہاکہ کراچی سمیت سندھ بھر میں لوڈشیڈنگ کا ذمہ دار وفاقی حکومت کو سمجھتے ہیں ۔سندھ کے عوام کو تنہانہیں چھوڑیں گے ۔پاکستان تحریک انصاف کے خرم شیر زمان نے کہا کہ کے الیکٹرک انتظامیہ نے کمیٹی کا استحقاق مجروح کیاہے ۔کے الیکٹرک کا جوابدہ بناکر رہیں گے ۔ایم کیو ایم کے سیف الدین خالد نے کہا کہ میری دعا ہے کہ سی ای او کے الیکٹرک کو جیل ہوجائے ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -