”اگر بائیکاٹ کرنا ہے تو پھر۔۔۔“ عامر سہیل نے بھارت میں بیٹھ کر بھارتی اینکر کی ”دھلائی“ کر دی، پاکستان کیساتھ کرکٹ نہ کھیلنے کے معاملے پر ایسا جواب دیا کہ دیکھ کر آپ ان کے گرویدہ ہو جائیں گے

”اگر بائیکاٹ کرنا ہے تو پھر۔۔۔“ عامر سہیل نے بھارت میں بیٹھ کر بھارتی اینکر ...
”اگر بائیکاٹ کرنا ہے تو پھر۔۔۔“ عامر سہیل نے بھارت میں بیٹھ کر بھارتی اینکر کی ”دھلائی“ کر دی، پاکستان کیساتھ کرکٹ نہ کھیلنے کے معاملے پر ایسا جواب دیا کہ دیکھ کر آپ ان کے گرویدہ ہو جائیں گے

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارت کا پاکستان کے ساتھ کرکٹ سیریز کھیلنے سے مسلسل انکار اور ایم او یو کی خلاف ورزی پر پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) حکام کیساتھ ساتھ شائقین اور سابق کرکٹرز بھی شدید غم و غصے میں مبتلا ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ طیارہ گر کر تباہ، شاہ رخ خان سمیت کئی افراد ہلاک، ایک خبر جس نے پوری دنیا کو ہلا کر رکھ دیا لیکن پھر۔۔۔

اس معاملے پر بھارت میں جب ایک پروگرام کے دوران سابق کرکٹر عامر سہیل سے اس بابت پوچھا گیا تو انہوں نے بھارتی اینکر کی ایسی ’دھلائی‘ کی کہ وہاں بیٹھے حاضرین بھی پریشانی کے عالم میں نظر آئے۔

پاکستان کیساتھ کرکٹ سیریز نہ کھیلنے کے معاملے پر گفتگو کرتے ہوئے عامر سہیل نے کہا کہ اگر آپ کے مسائل ہے تو انہیں حل کرنا ضروری ہے۔ لڑائی سے سارا کچھ نہیں ہو سکتا بلکہ لڑائی کرنے سے آپ مسائل کو آگ لگاتے ہو اور طویل دیتے ہو۔ آپ نے عقلمندی سے معاملات کو حل کرنا ہے، اور کچھ لے دے کر مسئلے کا حل تلاش کرنا ہوتا ہے لیکن میں حیران ہوں کہ آپ سخت موقف اختیار کرتے ہیں کہ پاکستان کے ساتھ سیریز نہیں کھیلنی اور تعلقات نہیں رکھنے، تو پھر ورلڈکپ والے میچ کیوں کھیلتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آپ کو پھر یہاں بھی بائیکاٹ کرنا چاہئے، کیوں بائیکاٹ نہیں کرتے؟ کیا یہاں پیسہ آ جاتا ہے، بھارتی براڈکاسٹر جو آئی سی سی کے میچز نشر کرتا ہے، اسے نقصان نہیں پہنچانا چاہتے؟ اگر آپ نے سخت موقف اختیار کرنا ہے تو پھر کریں لیکن یہ نہیں ہو سکتا کہ آئی سی سی کے ٹورنامنٹ میں کھیل لیں اور سیریز نہ کھیلیں۔

اس موقع پر اینکر نے کہا کہ بھارت آئی سی سی کا ٹورنامنٹ کیسے چھوڑ سکتا ہے اور آئی سی سی سے یہ کیسے کہہ سکتا ہے کہ آپ کے ٹورنامنٹ میں ہم پاکستان کے ساتھ نہیں کھیلیں گے۔

عامر سہیل نے اس پر بھی منہ توڑ جواب دیتے ہوئے کہا کہ آپ کے پاس مثال ہے کہ 1996ءمیں آسٹریلیا نے میچ چھوڑا تھا اور سری لنکا نہیں گیا آپ نے نہیں کھیلنا، آپ انکار کر سکتے ہیں۔ لیکن اگر آپ یہی کرتے رہیں گے کہ جہاں پیسہ آ جائے اور اپنے براڈ کاسٹر کی بات آ جائے تو ٹھیک ہے کھیل لیتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ طلوع آفتاب سے پہلے معروف سٹیج اداکارہ کی شیخ رشید کیساتھ ایسی تصویر سوشل میڈیا پر آ گئی کہ تہلکہ مچ گیا، دیکھنے والوں کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

میں اس وقت دیکھوں گا جب بھارتی براڈکاسٹر نہیں ہو گا ا اور آپ ورلڈکپ کا میچ کھیلتے ہیں یا نہیں کھیلتے۔ اگر آپ نے پاکستان کیساتھ تعلقات نہیں رکھنے اور کرکٹ نہیں کھیلنی تو پھر آئی سی سی ٹورنامنٹ بھی نہ کھیلیں۔ پھر آپ کا موقف اچھی طرح سمجھا جائے گا لیکن اپنے فائدے کیلئے میچ کھیل لیا اور جب دل کیا انکار کر دیا تو ایسا نہیں ہوتا۔

مزید :

کھیل -