ساہیوال: دبئی پلٹ جوڑے کو لوٹنے کے بعد گولیاں مارنے والا ڈاکو پولیس افسر نکلا

ساہیوال: دبئی پلٹ جوڑے کو لوٹنے کے بعد گولیاں مارنے والا ڈاکو پولیس افسر نکلا
ساہیوال: دبئی پلٹ جوڑے کو لوٹنے کے بعد گولیاں مارنے والا ڈاکو پولیس افسر نکلا

  

ساہیوال (ویب ڈیسک)حبیب بنک فرید ٹاﺅن سے کیش نکلوا کر دبئی پلٹ جوڑے کو گولیاں ما ر کر لوٹنے والے ڈاکو ﺅں میں پولیس فرید ٹاﺅن کا پولیس افسر ڈاکو نکلا، پولیس فرید ٹاﺅن نے ساڑھے آٹھ لاکھ روپے کی نقدی لوٹنے والے ڈاکو اﺅں تھانیدار اور اس کے ساتھیوں مقبول احمد، عطاءمحمد، قمر الزماں، عبدالرﺅف اور راﺅف احمد سمیت 8ڈاکوﺅں کے خلاف مقدمہ سوا دو سال بعد درج کر لیا۔ تفصیلات کے مطابق 17ستمبر 2015کو چک 6-96آر کا رضوان اور اسکی بیوی زوبیدہ جب بنک سے نقدی ساڑھے آٹھ لاکھ روپے لیکر نکلے اور اپنی کار نمبر 870ایل او ایس میں سوار ہونے لگے تو ڈاکوﺅں نے فائرنگ کرکے میاں بیوی کو زخمی کر دیا اور نقدی لوٹ لی۔ پولیس فرید ٹاﺅن کے موقعہ پر موجودپولیس کے افسر نے نقدی سمیٹ لی اور پھر ڈاکوﺅ ں کے خلاف کاروائی کی بجائے الٹا مقدمہ رضوان احمد کے خلاف اقدام قتل اور اور اقدام خود کشی کا مقدمہ درج کر دیا اور رضوان پر فائرنگ کرکے اپنی بیوی کو قتل کرنے کی سازش اور خود کو گولیاں مارنے کا مقدمہ بنایا تو حبیب بنک کے سی سی ٹی وی کیمروں نے اصل ملزموں کی پہچان کر دی اور پولیس فرید ٹاﺅن کے پولیس افسر کو نقدی سمیٹتے ہوئے پایا۔ جبکہ مقبول احمد، عطاء محمد، عبدالرﺅف، قمرالزماں، اور راﺅف احمد سمیت 8ملزموں کے خلاف پولیس فرید ٹاﺅن نے 2سال 4ماہ بعد ایڈیشنل سیشن جج چوہدری نذیر احمد کے حکم پر مقدمہ 337ا-324-392ایچ ٹو 149-148ت پ درج کرکے تفتیش شروع کر دی ہے۔

مزید :

ساہیوال -