کویت میں 10 سالہ بچے کے ساتھ4 لڑکوں کی جنسی زیادتی، لیکن پھر عدالت نے اس جرم کی کیا سزا سنائی؟ جان کر پاکستانیوں کو انصاف کے اس نظام پر یقین نہ آئے گا

کویت میں 10 سالہ بچے کے ساتھ4 لڑکوں کی جنسی زیادتی، لیکن پھر عدالت نے اس جرم کی ...
کویت میں 10 سالہ بچے کے ساتھ4 لڑکوں کی جنسی زیادتی، لیکن پھر عدالت نے اس جرم کی کیا سزا سنائی؟ جان کر پاکستانیوں کو انصاف کے اس نظام پر یقین نہ آئے گا

  

کویت سٹی (مانیٹرنگ ڈیسک) ذہنی معذور بچے کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا نے اور اس بھیانک فعل کی ویڈیو بنانے والے سات درندہ صفت مجرموں کو کویتی عدالت نے پھانسی سنا دی ہے ۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق4 کویتی، 2 یمنی ، 1 عراقی اور ایک دیگر ملزم کو اپریل کے مہینے میں ماتحت عدالت نے 10 سال قید کی سزا سنائی تھی لیکن اپیلز کورٹ نے اس سزا کو ناکافی قرار دیتے ہوئے ساتوں ملزمان کو سزائے موت سنائی ہے۔ سفاک ملزمان نے گزشتہ سال ستمبر میں 10 سالہ بچے کو اغوا کیا اور اسے ایک الگ تھلگ مقام پر عارضی قیام کیلئے بنے ایک مکان میں لے گئے ۔ ان سب نے بچے کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا اور اس درندگی کی ویڈیو بھی بناتے رہے۔ انہوں نے بچے کو دھمکی دی کہ اگر کسی کو کچھ بتانے کی کوشش کی تو وہ اس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر پوسٹ کر دیں گے۔

’اس نے مجھے اپنا موبائل پکڑایا اور کہا یہ فلم دیکھو اور پھر۔۔۔‘ دبئی کی مسجد میں نوعمر پاکستانی لڑکے کے ساتھ ایسی شرمناک ترین حرکت کہ جان کر شیطان بھی کانوں کو ہاتھ لگالے

جب یہ معاملہ پولیس کے علم میں آیا تو جلد ہی تمام ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا اور ان کے خلاف عدالت میں مقدمہ چلایا گیا۔ اپیلز کورٹ سے پھانسی کی سزا کے خلاف ملزمان سپریم کورٹ میں آخری اپیل کر سکتے ہیں۔

مزید :

عرب دنیا -