مانچسٹر میں بم دھماکہ کرنے والے سلمان عابدی کا جنازہ پڑھانے کیلئے علاقے کی مسجد سے کہا گیا تو انہوں نے کیا جواب دیا اور اب اس کی لاش کہا ہے؟ جان کر آپ بھی دنگ رہ جائیں گے

مانچسٹر میں بم دھماکہ کرنے والے سلمان عابدی کا جنازہ پڑھانے کیلئے علاقے کی ...
مانچسٹر میں بم دھماکہ کرنے والے سلمان عابدی کا جنازہ پڑھانے کیلئے علاقے کی مسجد سے کہا گیا تو انہوں نے کیا جواب دیا اور اب اس کی لاش کہا ہے؟ جان کر آپ بھی دنگ رہ جائیں گے

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) معصوم انسانوں کو خون میں نہلانے والے دہشتگرد اپنی عاقبت تو برباد کرتے ہی ہیں لیکن دنیا میں وہ کس طرح عبرت کا نشان بن جاتے ہیں اس کی ایک مثال برطا نوی شہر مانچسٹر میں خود کش حملہ کرنے والے سلمان عابدی کی صورت میں دیکھی جاسکتی ہے۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق مانچسٹر کی کسی مسجد کا امام اس دہشتگرد کا جنازہ پڑھانے کیلئے تیار نہیں جبکہ شہر کے تمام قبرستانوں نے اسے قبر کی جگہ دینے سے انکار کردیا ہے۔ ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ مانچسٹر شہر کے حکام کا کہنا ہے کہ وہ اس بات کو یقینی بنانے کیلئے اپنا پورا زور لگادیں گے کہ اس دہشت گرد کو مانچسٹر شہر کی زمین میں دفن نہ ہونے دیا جائے۔ تدفین تو دور کی بات اس کی لاش بھی مانچسٹر شہر سے باہر ایک مردہ خانے میں پڑی ہے اور کوئی اسے قبول کرنے کو تیار نہیں ہے۔

اس آدمی نے مسلمانوں کو تنگ کرنے کیلئے مارکیٹ میں حلال کھانے پر خنزیر کا گوشت رکھ دیا، لیکن پھر کیا ہوا؟ نتیجہ اس نے کبھی خوابوں میں بھی نہ سوچا ہوگا، لینے کے دینے پڑگئے کیونکہ

رپورٹ کے مطابق مانچسٹر حملے کے بعد جب لاشیں جمع کرنے کا سلسلہ شروع ہوا تو اسی وقت سلمان عابدی کی باقیات کو اس کا نشانہ بننے والے بے گناہ افراد کی لاشوں سے دور لیجا کر رکھا گیا تھا۔ حکام کا کہنا تھا کہ 22 معصوم افراد کی جان لینے والے کی باقیات کو ان معصوموں کی لاشوں کے قریب کیسے رکھا جا سکتا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -