مولانا یوسف تحریک آزادی کشمیر کا ناقابل فراموش کردارہیں،سردارمسعود خان

مولانا یوسف تحریک آزادی کشمیر کا ناقابل فراموش کردارہیں،سردارمسعود خان

  

مظفرآباد(بیورورپورٹ)آزاد جموں وکشمیر کے صدر سردارمحمد مسعودخان، وزیراعظم راجہ محمد فاروق حیدر خان اور وزیر اطلاعات مشتاق احمد منہاس نے کہا ہے کہ میر واعظ کشمیر مولانا محمد یوسف کا تحریک آزاد ی کشمیر میں کردار نا قابل فراموش ہے میر واعظ( مرحوم) ہم سے صرف یہ حسرت لے کر جدا ہوئے کہ ساری ریاست اغیار کے پنجہ غلامی سے آزادی ہو کر پاکستان کا حصہ بن جائے ۔ آئیے ہم سچے دل سے تجدید عہد کریں کہ اس عظم مقصد کو پایہ تکمیل تک پہنچانے میں اپنا قومی کردار ادا کرتے رہیں گے ۔خدا ہمیں اپنے اس مشن کی تکمیل کی ہمت دے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے میر واعظ کشمیر مولانا محمد یوسف شاہ کی برسی کے موقع پراپنے الگ الگ پیغامات میں کیا صدر آزادکشمیر سردار مسعود احمد خان نے کہا کہ میر واعظ کشمیر ایک عظیم دینی اور سیاسی شخصیت تھے ۔ جموں و کشمیر کی تاریخ کے ایک نازک دور میں انہوں نے جس تدبر اور ثابت قدمی سے ریاست کے مسلمانوں کی راہنمائی کی وہ تاریخ میں زندہ رہے گی ۔ انہوں نے کہا کہ ریاست جموں و کشمیر اورخاص کر سرینگر میں میر واعظ کشمیر کا خاندان ایک مدت سے فروغ اسلام کا مرکز رہا ہے ۔ اس خاندان نے دین اشاعت کے ساتھ ساتھ مسلمانوں کی فکری اور سیاسی راہنمائی بھی کی ۔ اس مرکز سے وادی کشمیر میں تحریک آزادی اور الحاق پاکستان کو بنیاد حاصل ہوئی جس نے آگے چل کر ایک عظیم انقلاب کی صورت اختیار کر لی ۔ وزیر اعظم راجہ محمد فاروق حیدر خان نے اپنے پیغام میں کہا کہ کشمیری عوام اس موقع پر اس عہد کی تجدید کر رہے ہیں کہ جس عظیم مقصد کیلئے مولانا محمدیوسف شاہ اور ان کے خاندان نے ایک طویل عرصہ تک جد وجہد جاری رکھیں ۔ اس کے حصول تک مصاعی جاری رکھی جائے گی ۔وزیراعظم نے کہا کہ میر واعظ کشمیر مولانا محمدیوسف شاہ اور ان کے خاندان نے کشمیری عوام کو دین اسلام سے وابستہ رکھنے اور انہیں آزادی کی نعمت سے ہمکنار کرنے کیلئے گراں قدر خدمات انجام دیں وہ کشمیری عوام کے سچے بہی خواہاں تھے ۔جنہوں نے ایک طرف انہیں اسلامی تعلیمات سے نواز نے کیلئے اپنی کوششیں جاری رکھیں تو دوسری طرف انہیں اتحاد اور یگانگت کا درس دیا ۔ان کی نگاہ دوربین نے دیکھ لیا تھا کہ مسلمانوں میں جس چیز کی کمی ہے وہ اتحاد اور اتفاق ہے جس کے بغیر کوئی بھی قوم اپنے قومی مقاصد حاصل نہیں کر سکتی ۔ وزیراعظم نے کہا کہ میر واعظ کشمیر مسئلہ کشمیر کو عالمی سطح پر اجاگر کرنے کے ساتھ ساتھ آزاد جموں و کشمیر کی تعمیر و ترقی میں گہری دلچسپی لی ۔انہوں نے اسلامی ممالک کے دورے بھی کیے ۔ قرآن مجید کا کشمیری زبان میں ترجمہ اور تفسیر ان کا ایسا بڑا کارنامہ ہے جسے قیامت تک یاد رکھا جائے گا ۔ وزیراعظم آزاوکشمیر نے کہا میں میں اس موقع پر یقین دلاتا ہوں کہ میر واعظ کشمیر کے مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لائے جائیں گے۔ کشمیریوں کی جدوجہد اپنے جائز موقف کیلئے ہے۔ بھارت کو سنجیدگی کا مظاہر ہ کرتے ہوئے کشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت دینے میں ہٹ دھرمی ترک کرے۔ مسئلہ کشمیر کو اجاگر کرنے کیلئے موجودہ حکومت بین الاقوامی فورم پر کوششیں جاری رکھے ہوئے ہے جو نتیجہ خیز ثابت ہونگی۔کشمیری اپنی منزل ضرور حاصل کر کے رہیں گے۔وزیر اطلاعات مشتاق احمد منہاس نے کہا کہ میر واعظ کشمیر مولانا محمدیوسف شاہ اور ان کے خاندان نے کشمیری عوام کو دین اسلام سے وابستہ رکھنے اور انہیں آزادی کی نعمت سے ہمکنار کرنے کیلئے گراں قدر خدمات انجا م دیں وہ کشمیری عوام کے سچے بہی خواہاں تھے ۔جنہوں نے ایک طرف انہیں اسلامی تعلیمات سے نواز نے کیلئے اپنی کوششیں جاری رکھیں تو دوسری طرف انہیں اتحاد اور یگانگت کا درس دیا ۔ان کی نگاہ دوربین نے دیکھ لیا تھا کہ مسلمانوں میں جس چیز کی کمی ہے وہ اتحاد اور اتفاق ہے جس کے بغیر کوئی بھی قوم اپنے قومی مقاصد حاصل نہیں کر سکتی میر واعظ کشمیرآزاد جموں وکشمیر کی صدارت کے عہد ہ جلیلہ پر دوبار متمکن ہوئے اور انہوں نے اس حیثیت سے مسئلہ کشمیر کو عالمی سطح پر اجاگر کرنے کے ساتھ ساتھ آزاد جموں و کشمیر کی تعمیر و ترقی میں گہری دلچسپی لی ۔میر واعظ کشمیر مولانا محمدیوسف شاہ کی برسی کے موقع پر میں کشمیری عوام کو دلی مبارکباد پیش کرتا ہوں کہ بھارتی افواج کے مظالم کے باوجو د ان کی جد و جہد آزادی میں ہر گز کمی نہیں آئی بلکہ جدو جہد میں مزید تیزی آئی ہے ۔ مجھے یقین ہے کہ کشمیری عوام کی قربانیاں ثمر بار ہونے ہی کو ہیں اور انشاء اللہ وہ دن دور نہیں جب کشمیری عوام اپنی آزادی اور حق خود ارادیت کے حصول کی کوششوں میں کامیاب و کامران ہوں گے ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -