چاروں صوبائی اسمبلیاں تحلیل ہونے کے باوجو د موجودہ وزرائے اعلیٰ نگران وزرائے اعلیٰ کی تعیناتی تک فرائض سرانجام دیں گے

چاروں صوبائی اسمبلیاں تحلیل ہونے کے باوجو د موجودہ وزرائے اعلیٰ نگران ...
چاروں صوبائی اسمبلیاں تحلیل ہونے کے باوجو د موجودہ وزرائے اعلیٰ نگران وزرائے اعلیٰ کی تعیناتی تک فرائض سرانجام دیں گے

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)چاروں صوبائی اسمبلیوں کی مدت پوری ہونے کے باوجودچاروں صوبوں میں نگران وزرائے کی تعیناتی تک چاروں وزرائے اعلیٰ اپنی ذمہ داریاں نبھاتے رہیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق سو ل سیکرٹریٹ سے جاری بیان کے مطابق چاروں وزرائے اعلیٰ نگران وزرائے اعلیٰ کے مقرر ہونے تک اپنی موجودہ ذمہ داریاں سرانجام دیں گے ، آئین کے آرٹیکل 224اور 224Aکے مطابق وزرائے اعلیٰ روز مرہ فائلوں پر حکم دے سکیں گے تاہم وہ پالیسی فیصلے کرنے کے مجاز نہیں ہونگے ۔

واضح رہے کہ پنجاب کے نگراں وزیراعلیٰ کیلئے پاکستان تحریک انصاف اور ن لیگ کسی حتمی فیصلے تک نہیں پہنچ سکی ہے جبکہ دوسری جانب کے پی کے اور بلوچستان کے وزیراعلیٰ کیلئے نام فائنل نہیں ہو سکے ہیں تاہم سندھ کے وزیراعلیٰ فضل الرحمان کانام فائنل کر لیا گیاہے ۔یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ پاکستان تحریک انصاف اور ن لیگ نے پنجاب کے وزیراعلیٰ کیلئے ناصر محمود کھوسہ کے نام پر اتفاق کر لیا تھا لیکن پی ٹی آئی کی جانب سے یوٹرن لے لیا گیا اور ناصر محمود کھوسہ کا نام واپس لے لیا گیا جس کے بعد اب پی ٹی آئی نے مزید چار نام دے دیئے ہیں جن میں حسن عسکری، یعقوب اظہار، ایاز میر اور اوریا مقبول جان شامل ہیں۔

مزید :

قومی -