کرونا وائرس نے لاہور اور کوئٹہ میں مزید 2ڈاکٹروں کی جان لے لی

کرونا وائرس نے لاہور اور کوئٹہ میں مزید 2ڈاکٹروں کی جان لے لی

  

لاہور، کوئٹہ (آئی این پی) لاہور میں کورونا وائرس ایک اور نوجوان ڈاکٹر کی زندگی نگل گیا،سی ایم ایچ میں زیر علاج ڈاکٹر علی نذیر کورونا وائرس کے باعث دم توڑ گیا۔ادھر بلوچستان میں کورونا وائرس سے لڑتے ہوئے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال مستونگ کے سابق چائلڈ اسپیشلسٹ ڈاکٹر شاہ ولی جان کی بازی ہار گئے۔ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ بلوچستان کے مطابق ڈاکٹر شاہ ولی بولان میڈیکل کمپلیکس (بی ایم سی) کے آئسولیشن وارڈ میں زیر علاج تھے لیکن وہ جانبر نہ ہوسکے۔دوسری جانب چند روز قبل کورونا وائرس کے خلاف فرنٹ لائن پر لڑتے ہوئے شہید ہونے والے کوئٹہ کے بولان میڈیکل کمپلیکس کے ٹراما سینٹر کے انچارج ڈاکٹر زبیر خان کی اہلیہ نے ہسپتال پر صحیح علاج نہ کرنے کا الزام عائد کر دیا۔ ڈاکٹر زبیر خان کی اہلیہ نے کہا کہ علاج کی سہولت نہ ملنے کے باعث ان کے شوہر کا انتقال ہوا ہے۔ سینئر ڈاکٹر ہی کو کورونا ٹیسٹ کی رپورٹ غلط بتائی گئی تھی۔اہلیہ نے کہا کہ کیا ایک ڈاکٹر اس قدر ابتر حالت میں ہو گا کہ اسے ٹریٹمنٹ بھی نہیں ملے گی، اسے داخل ہونے کے لیے مرنے کا انتظار کرنا پڑے گا، خدارا ایسا نہ کریں، میرے اور میرے بچوں کے سر کا سائبان چھن گیا ہے۔

ڈاکٹر جاں بحق

مزید :

صفحہ اول -