مستقبل میں بھی ہواووے ڈیجیٹل چین کی بنیاد رکھے گا

مستقبل میں بھی ہواووے ڈیجیٹل چین کی بنیاد رکھے گا

  

اسلام آباد (پ ر) کوویڈ 19 کے بعد صنعت کی ڈیجیٹلائزیشن ترقی کے ایک نئے مرحلے میں داخل ہوگئی ہے جو مارکیٹ کی مضبوط لچک اور اس کی ترقی کی علامت ہے۔ ڈیجیٹلائزیشن حکومتی انتظام ماڈل اور عمودی صنعتوں کے کاروباری ماڈلز اور ساتھ ہی پیداوار اور خدمات کی کارکردگی کو بھی فروغ دے سکتی ہے۔ اس کو ذہن میں رکھتے ہوئے، مختلف صنعتوں میں ڈیجیٹل تبدیلی کی سمت کا تعین کیاگیا ہے، اور انہیں کس طرح تبدیل ہونا چاہئے؟ کاروباری کامیابی، صارفین کو مدد فراہم کرنے میں ہواوے کیا کر سکتا ہے؟ 19 مئی کو ہواوے عالمی تجزیہ کار سمٹ (HAS 2020) میں، ہواووے انٹرپرائز بزنس گروپ نے صنعت کے رجحانات اور چیلنجوں کے بارے میں اپنے تجربات کا تبادلہ کیا جس کا سامنا اسے عالمی تجزیہ کاروں اور میڈیا کے ساتھ ہے۔ ہواووے انٹرپرائز بزنس گروپ شراکت داروں کے ساتھ مل کر انڈسٹری ڈیجیٹلائزیشن مارکیٹ کی تلاش کریگا اور صارفین کو بہترین،معیاری سروس فراہم کر ے گا۔کو رونا کے بعد پو ری دنیا خصوصا کا روباری اداروں کو احساس ہو گیا کہ ڈیجیٹل تبدیلی لازمی ہے۔ نئی آئی سی ٹی ٹیکنالوجیز جیسے 5 جی، اے آئی، اور کلاڈ کمپیوٹنگ کی ترقی اور متحد ایپلی کیشن نے عمودی صنعتوں میں ڈیجیٹل تبدیلی کو نمایاں طور پر تیز کیا ہے۔ہواوے کے انٹرپرائز بی جی کے لئے عالمی مارکیٹنگ کے صدر کیو ہینگ نے اپنی "" ہر تنظیم کو ڈیجیٹل میں لائیں " کی تقر یب میں تقریر کے دوران 2019 میں ہواوے انٹرپرائز بی جی کی کاروباری کارکردگی اور مقاصد کو متعارف کرایا۔ عالمی صارفین اور شراکت داروں کی حمایت سے، ہواوے انٹرپرائز بی جی نے 2019 میں CNY 89.7 بلین کی فروخت آمدنی حاصل کی۔

، جس میں سے 86 فیصد شراکت داروں کی شراکت میں آیا۔ ہواوے دنیا بھر میں 50000سے زیادہ انٹرپرائز صارفین کی خدمت کرتا ہے۔تقریب کے دوران ہواوے کے عالمی ٹرانسپورٹیشن بی یو کے نائب صدر نے نقل و حمل کے شعبے میں ہواوے کے تجربے کو شیئر کیا،اور کہا کہ "مستقبل میں ٹرانسپورٹ انڈسٹری مزید مستحکم ہونے کے ساتھ، ہواوسی ماحولیاتی نظام کے شراکت داروں کے ساتھ ایک مشترکہ جامع ٹرانسپورٹ سسٹم کی تشکیل کے لئے تعاون جاری رکھے گا۔ ہواوے کے عالمی مالیاتی خدمات بی یو کے سی ٹی او مسٹر ونسنٹ چن نے کہا کہ ہواوے آئی سی ٹی انفراسٹرکچر میں اپنی جدید ٹیکنالوجی اور سرانجام دینے کا عمل جاری رکھے گا تاکہ مالی اداروں کو جامع مالیات جیسے کاروباری حکمت عملیوں پر عملدرآمد کرنے میں مدد ملے۔ہواوے ای بی جی گلوبل انرجی انڈسٹری کے چیف ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن آفیسر مسٹر ڑیا وینبو کا خیال ہے کہ ان چیلنجوں سے بجلی کی صنعت کی تبدیلی اور اپ گریڈ میں تیزی آئے گی۔ مستقبل میں بھی ہواوے ڈیجیٹل چین کی بنیاد رکھے گا اور ڈیجیٹل دنیا کی بنیاد "نیا رابطہ، نیا کمپیوٹنگ، نیا پلیٹ فارمز، اور نیا ماحولیاتی نظام" پر مبنی ہوگا۔

مزید :

کامرس -