منی لانڈرنگ کیس،شہباز شریف کی عبوری درخواست ضمانت سماعت کیلئے مقرر،دورکنی بنچ میں کون سے جج شامل ہیں؟خبر آگئی

منی لانڈرنگ کیس،شہباز شریف کی عبوری درخواست ضمانت سماعت کیلئے مقرر،دورکنی ...
منی لانڈرنگ کیس،شہباز شریف کی عبوری درخواست ضمانت سماعت کیلئے مقرر،دورکنی بنچ میں کون سے جج شامل ہیں؟خبر آگئی

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آنلائن)آمدن سے زائد اثاثوں اور منی لانڈرنگ کیس میں اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کی عبوری درخواست ضمانت سماعت کے لیے مقرر کر لی گئی ہے، لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس طارق عباسی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ(کل) منگل کو سماعت کرے گا،شہباز شریف نے عبوری ضمانت کے لئے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق آمدن سے زائد اثاثوں اور منی لانڈرنگ کیس میں شہباز شریف کی عبوری درخواست ضمانت سماعت کے لئے مقرر کر لی گئی ہے، لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس طارق عباسی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ(کل) منگل کو سماعت کرے گا،شہباز شریف نے عبوری ضمانت کے لئے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا تھا۔شہباز شریف نے اپنی درخواست میں چیئرمین نیب سمیت دیگر کو فریق بناتےہوئےموقف اختیارکیاہے کہ 1972ء میں بطور تاجر کاروبار شروع کرتے ہوئے زراعت، شوگر اور ٹیکسٹائل انڈسٹری میں اہم کردار ادا کیا۔درخواست میں انہوں نے کہا کہ سماج کی بھلائی کے لیے 1988ء میں سیاست میں قدم رکھا۔ نیب نے بدنیتی کی بنیاد پر آمدن سے زائد اثاثوں کا کیس بنایا ہے۔

شہباز شریف نےدرخواست میں الزام عائدکیاہےکہ موجودہ حکومت کے سیاسی اثر ورسوخ کی وجہ سے نیب نے انکوائری شروع کی،2018ء میں اسی کیس میں گرفتار کیا گیا،اس وقت بھی نیب کے ساتھ بھرپور تعاون کیا،2018ءمیں نیب نے اختیارات کے ناجائز استعمال کا ایک بھی ثبوت سامنے نہیں رکھا، نیب ایسے کیس میں اپنے اختیار کا استعمال نہیں کر سکتا جس میں کوئی ثبوت موجود نہ ہو۔شہباز شریف نے موقف اختیار کیا کہ تواتر سے تمام اثاثے ڈکلیئر کرتا آ رہا ہوں،منی لانڈرنگ کے الزامات بھی بالکل بے بنیاد ہیں، نیب انکوائری کے دوران اینٹی منی لانڈرنگ ایکٹ کے اختیارات استعمال نہیں کر سکتا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -