لکی کمیٹیوں،انعامی سکیم کا جھانسہ دیکر شہریوں کو لوٹنے کاانکشاف

لکی کمیٹیوں،انعامی سکیم کا جھانسہ دیکر شہریوں کو لوٹنے کاانکشاف

  

خانیوال (بیورو نیوز)  شہریوں کو سنہرے خواب دیکھا کر موٹر سائیکل انعامی سکیم او رلکی کمیٹیوں کی آڑ میں شہریوں سے مبینہ طور پر ماہانہ لاکھوں روپے لوٹنے کا انکشاف،ضلع خانیوال کی چاروں تحصیلوں کے شہر شہر قبضہ جات میں لکی کمیٹیوں کے پینا فلیکس اویزاں، ذرائع کے مطابق خانیوال شہر میں مافیا نے جگہ جگہ اپنا جال بچھار رکھا ہے جو شہریوں کو مختلف حیلے بہانوں سے عوام کی جیبوں میں ڈاکہ ڈالنے میں مصروف ہیں، ذرائع کے مطابق اسٹیڈیم روڈ میں واقع موٹر سائیکل(بقیہ نمبر23صفحہ6پر)

 شاپس کی لکی انعامی سکیم میں تقریباً300 ممبران میں فی کس سے 2000سے لیکر لاکھوں روپے جمع کر کے ہر ماہ 43ہزار روپے مالیت کی موٹر سائیکل دیکر عوام کو بیوقوف بنا رکھا ہے، بقیہ لاکھوں روپے ماہانہ جمع کر کے شہریوں کے انعامی سکیم 300 ممبران میں فی کس  2000 روپے لیکر لاکھوں روپے جمع کر کے ہر ماہ 50 ہزار روپے کی موٹر سائیکل دیکر عوام کو بیوقوف بنارکھا ہے، بقیہ لاکھوں روپے ماہانہ جمع کر کے شہریوں کے انعامی سکیم کے اختتام پر استری، واشنگ مشینیں، جوسر مشینیں او رموٹرسائیکل دینے کا جھانسہ دے رکھا ہے، لکی سٹار 125 موٹر سائیکل سکیم میں 200 ممبران فی کس ماہانہ 2500 وصول کر کے اڑھائی لاکھ عوام سے لیکر ایک موٹر سائیکل قرعہ اندازی کے ذریعے دیکر دھندہ چلانے میں  مصروف ہے، جبکہ خانیوال میں واقع سر سید روڈ اختر ی موٹرز، فضل پارک روڈ شہیر موٹرز، الحسیب موٹرز،الغنی موٹرز لکی کمیٹی،بلال لکی کمیٹی، دھماکہ انعامی سکیم کے ضلع بھر میں اشتہار، پینافلیکس پھیلا دیئے گئے ہیں،98 ممبران سے فی کس 3 ہزار کے حساب سے 6 لاکھ وصول کر کے ماہانہ صرف ایک چائنہ موٹر سائیکل دینے کا جھانسہ دیتے ہیں، اس کے علاوہ خانیوال سمیت صوبہ بھر کے مختلف اضلاع سمیت جا بجا عوام کی پر زور فرمائش، خوشخبری ہی خوشخبری کے بینرز، اشتہار پھیلا کر صرف 3 ہزار روپے میں موٹرسائیکل کے مالک بننے او رپورے جہیز کا سامان لینے کا جھانسے دیکر کروڑوں کا فراڈ کیا جارہا ہے،ضلع بھر میں موٹر سائیکل لکی کمیٹیوں کے نام پر لوٹ مار کا سلسلہ جاری، سکیم میں 200 ممبران تک شامل کر کے فی کس  2 ہزار لیکر ماہانہ 1 موٹر سائیکل دی جاتی ہے، سرسید روڈ، گپی والا چوک، فضل پارک روڈ میں مافیا متحرک ہے۔ ذرائع کے مطابق 36 ماہ، 48 ماہ کی طویل معیاد پر کروڑوں بٹور کر رفو چکر ہو کر عوام کو دربدر ٹھوکریں کھانے پر مجبور کر رہے ہیں جبکہ ان مافیا کے پیچھے علاقے کے بااثر سیاسی شخصیات کا ہاتھ ہوتا ہے مقامی پولیس بھی حصہ لیکر اس دھندے کو مزید پروان چڑھانے میں مصروف ہے عوامی وسماجی حلقوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے لیٹر ے مافیا کے نیٹ ورک کیخلاف کاروائی کا مطالبہ کیاہے۔

انکشاف

مزید :

ملتان صفحہ آخر -