لاک ڈاؤن کے بعد گریٹر اقبال پارک کھل گیا، عوام کی تعداد نہ ہونے کے برابر، صفائی کے انتظامات نہ ہو سکے 

         لاک ڈاؤن کے بعد گریٹر اقبال پارک کھل گیا، عوام کی تعداد نہ ہونے کے ...

  

 لاہور(انور کھرل) کورونا لاک ڈاؤن کے بعد کھولے جانے والے مینار پاکستان پر پہلے دن رونقیں بحال نہ ہو سکیں اور شہریوں کی بڑی تعداد معمول کے مطابق سیروتفریح کے لئے نہ آئی، تاہم طویل عرصہ کے بعد کھلنے والے گریٹر اقبال پارک سمیت مینار پاکستان کی گراؤنڈ کی صفائی کے خاطر خواہ انتظامات نہ کئے گئے۔ تفصیلات کے مطابق کورونا  لاک ڈاؤن کے دوران صوبائی دارالحکومت کے تمام پارکس سمیت قومی یاد گار مینار پاکستان اور گریٹر اقبال پارک کو بھی سیروتفریح کے لئے بند کر دیا گیا تھا۔ اس حوالے سے  روزنامہ پاکستان کے سروئے میں یہ معلوم ہوا کہ مینار پاکستان کی گراؤنڈ اور گریٹر اقبال پارک میں صفائی کے ناقص انتظامات تھے۔ واش رومز گندگی سے اَٹے ہوئے جبکہ واش روم میں لگی ٹوٹیاں خراب اور بعض غائب تھیں۔ گریٹر اقبال پارک میں   جھیل کسی گندے تالاب کا منظر پیش کر رہی تھی جبکہ آبشار لاک ڈاؤن کے دوران بند رہنے سے خراب اور بند پڑی تھیں۔اسی طرح ٹک شاپ اور کیفے بھی بند رہنے پر کباڑخانوں کا منظر پیش کر رہے تھے۔پارک میں ایس او پیز پر عملدرآمد بھی نہ ہونے کے برابر تھا۔ اس حوالے سے شہری محمد اقبال، حسن مرتضیٰ، منظور حسین، گل محمد، احتشام نبی، شمس الٰہی، محمد حسین بھولا، صوفی صدیق احمد، احسن اقبال، رقیہ بی بی، امبرین بنت سلطان، صوفیہ کلثوم، احمد دین، سبحان اختر و دیگر کا کہنا تھا کہ شدید گرمی میں ماسک پہننا انتہائی مشکل ہے۔ کورونا سے بچتے بچتے سانس کی بیماریاں لگ رہی ہیں۔ البتہ موسم بہتر ہونے پر ماسک کا استعمال کیا جا سکتا ہے۔اس حوالے سے ڈائریکٹر گریٹر اقبال پارک علی نواز شاہ اور چیف سیکیورٹی انچارج پی ایچ اے محمد ضمیر کا کہنا ہے کہ لاک ڈاؤن کے دوران بھی صفائی روزانہ کی بنیاد پر کی جاتی ہے تاہم پارکس کھولنے کے احکامات کے بعد چیئرمین پی ایچ اے کی ہدایت پر عملے کو مزید الرٹ کر دیا گیا ہے۔ شہریوں کی سہولت کے لئے واش رومز کی صفائی، پانی کی دستیابی اور دیگر انتظامات کو یقینی بنا یا گیا ہے۔ جھیل کا پانی تبدیل کیا جا رہا ہے، تاہم آبشار نہیں چلائی جارہیں۔ دوسری جانب ایس او پیز پر بھی سختی سے عملدرآمد کروایا جا رہا ہے۔مینار پاکستان اورگریٹر اقبال پارک میں شہریوں کو بغیر ماسک پہنے داخل نہیں ہونے دیا جا رہا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -