جنوبی پنجاب: نہری پانی کا بحران، کپاس سمیت متعدد فصلیں بری طرح متاثر 

  جنوبی پنجاب: نہری پانی کا بحران، کپاس سمیت متعدد فصلیں بری طرح متاثر 

  

بہاولپور،منظورآبادمڑل(ڈسٹرکٹ رپورٹر، نمائندہ پاکستان)بہاولپور سمیت جنوبی پنجاب میں نہری پانی کی کمی شدت اختیار کر گئی بہاولپور ڈویزن کی نہروں میں پانی 50 فیصد سے بھی کم ہو گیاجنوبی پنجاب سمیت چولستان میں کماد اور کپاس کی فصلیں متاثر ہورہی ہیں   تفصیل کے مطابق پاکستان کسان اتحاد بہاولپور خالد محمود کھوکھر گروپ کے ضلعی صدر حافظ حفیظ احمد ملک اور جنرل سیکریٹری شفقت علی بخاری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جنوبی پنجاب سمیت بہاولپور ڈویزن میں نہری پانی کی بندش اور کمی شدت اختیار کر گئی ہے، 50 فیصد سے زائد کاشتکاروں کو نہری پانی کی کمی کا سامنا ہے، بہاولپور ڈویزن میں چولستان کے کاشتکاروں کو نہری پانی کی کمی اور بندش سے سخت مشکلات کا سامنا ہے، کماد کپاس ودیگر فصلیں (بقیہ نمبر52صفحہ6پر)

 متاثر ہو رہی ہیں، پانی کے اس سنگین بحران کی وجہ سے کئی علاقوں میں سونا اگلتی زمینیں بنجر ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے، جس کی وجہ سے زرعی معیشت پر منفی اثرات مرتب ہوں گے اور زرعی معیشت کو  ناقابل تلافی نقصان پہنچے گا، انہوں نے مزید کہا کہ جنوبی پنجاب کے نہری نظام متاثر ہونے سے کپاس کماد ودیگر پیداوار میں کمی واقع ہو گی اور ہر گزرتے دن کے ساتھ پانی کی کمی میں مزید اضافہ ہوتا جارہا ہے جس کی وجہ سے جنوبی پنجاب کا کسان معاشی بدحالی کا شکار ہے، اکثر وبیشتر علاقوں میں نہری پانی کی کمی اور زیر زمین پانی زرعی استعمال کے قابل نہ ہونے کے باعث کسان فصلیں کاشت کرنے سے قاصر ہیں، حکومت کی نااہلی وعدم دلچسپی کے باعث زرعی ٹیوب ویلوں کے بلوں میں مسلسل اضافہ کی وجہ سے فصلیں کو سیراب کرنے کے لئے بجلی کا استعمال بہت مہنگا ہو گیا ہے پاکستان کسان اتحاد بہاولپور خالد محمود کھوکھر گروپ کے ضلعی صدر حافظ حفیظ احمد ملک اور جنرل سیکرٹری سید شفقت علی بخاری کمشنر بہاولپور محکمہ انہار کے افسران بالا اور وزیر اعلی پنجاب سے نہری پانی کی کمی کا نوٹس لینے اور بہاولپور ڈویزن کی تمام نہروں ٹیلوں تک نہری پانی کی فراہمی کا مطالبہ کیا ہے۔

کاشتکار پریشان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -