کشمیری عوام کو آزادی کے جائزحق کے مطالبہ سے نہیں روکا جاسکتا،ترک سپیکر

  کشمیری عوام کو آزادی کے جائزحق کے مطالبہ سے نہیں روکا جاسکتا،ترک سپیکر

  

انقرہ  (مانیٹرنگ ڈیسک) ترکی کی گرینڈ نیشنل اسمبلی کے سپیکر مصطفیٰ شین توپ نے کہا ہے کہ فلسطین اور کشمیر میں ہونے والے اقدامات باعث تشویش ہیں۔ جنوبی ایشیا میں امن واستحکام کو مسئلہ کشمیر کے حل سے علیحدہ نہیں کیا جا سکتا۔ترک سپیکر مصطفیٰ شین توپ نے کہا کہ پاکستان ترکی کے لئے انتہائی خصوصی اہمیت کا حامل برادر ملک ہے۔ اقتصادی تعاون تنظیم کی پارلیمانی اسمبلی کے اجلاس سے علاقائی رابطوں کے فروغ کے لئے باہمی پارلیمانی شراکت داری اور رکن ممالک کے مابین تعلقات میں اضافہ ہو گا جبکہ خطے میں پائیدار ترقی کے اہداف پر عملدرآمد کے حوالے سے کووڈ۔19 کے اثرات کا جائزہ لے کر باہمی روابط کو فروغ دیا جائے گا۔ تنظیم کے رکن ممالک ترقی اور غربت کے خاتمہ کے لئے سیاحت کے فروغ کے لئے پالیسی بھی مرتب کریں گے۔ان خیالات کا اظہار مصطفیٰ شین توپ نے سرکاری میڈیا اے پی پی کو دیئے گئے ایک خصوصی انٹرویو میں کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اقوام متحدہ کی مسئلہ کشمیر کے حل کے بارے میں قراردادیں انتہائی واضح ہیں، توقع ہے کہ اس مسئلہ کو مذاکرات اور اقوام متحدہ کی متعلقہ قراردادوں کی روشنی میں کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق حل کیا جائے گا۔

ترک سپیکر

مزید :

صفحہ اول -