اسلام آباد میں صحافیوں پر سب سے زیادہ حملے ہو رہے ہیں،شیری رحمان 

اسلام آباد میں صحافیوں پر سب سے زیادہ حملے ہو رہے ہیں،شیری رحمان 

  

 اسلام آباد (این این آئی) پاکستان پیپلز پارٹی نے پاکستان میڈیا ڈویلپمنٹ اتھارٹی آرڈیننس 2021 کو مسترد کر دیا۔ اپنے بیان میں شیری رحمن نے کہاکہ حکومت پاکستان میڈیا ڈویلپمنٹ اتھارٹی آرڈیننس 2021 کے ذریعے میڈیا پر دباؤ ڈالنے کی کوشش کر رہی ہے،یہ میڈیا مارشل لا' قابل مذمت ہے، اس کی بھرپور مخالفت کریگی، جرنلسٹ پروٹیکشن بل اسمبلی سے پاس ہونے کے بعد اس آرڈیننس کی تیاری کرنا حکومت کا دوہرا معیار ہے۔ انہوں نے کہاکہ عالمی اداروں نے بھی ملک میں سنسرشپ پر تشویش کا اظہار کیا ہے، انٹرنیشنل فیڈریشن آف جرنلسٹ کے مطابق پاکستان صحافیوں کیلئے دنیا کا 5واں خطرناک ملک ہے، انہوں نے کہاکہ اسلام آباد میں صحافیوں پر سب سے زیادہ حملے ہو رہے ہیں، پریس فریڈم اینڈیکس میں پاکستان صرف دو سال میں 139 سے 145 پر آ گیا ہے،اس اتھارٹی کے تحت میڈیا کی مزید سخت نگرانی کا منصوبا بن رہا ہے، اس اتھارٹی کے ذریعے صحافیوں کو نکالا جائے گا اور جرمانے لاگو کئے جائینگے۔ انہوں نے کہاکہ حکومت کی میڈیا کو وضاحت فراہم کرنے کی کوئی ذمہ داری نہیں ہوگی، اس قانون کو ڈیجیٹل پلیٹ فارم پر قابو پانے کیلئے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ یہ تباہی سرکار کا سنسرشپ کو ادارتی اور قانونی تحفظ دینے کا منصوبہ ہے، اس کے بعد میڈیا ادارے یا تو ریاستی ترجمان بن جائے گے یا بند ہوجاجائینگے۔

شیری رحمان 

مزید :

صفحہ آخر -