ماڈل قتل کیس ، جوس میں زہر ملا کر اریبہ کو قتل کیا ، لاش نہر میں پھینکنا چاہتی تھی : ملزمہ طوبیٰ کا تحریری بیان

ماڈل قتل کیس ، جوس میں زہر ملا کر اریبہ کو قتل کیا ، لاش نہر میں پھینکنا چاہتی ...
ماڈل قتل کیس ، جوس میں زہر ملا کر اریبہ کو قتل کیا ، لاش نہر میں پھینکنا چاہتی تھی : ملزمہ طوبیٰ کا تحریری بیان

  

لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک ) ماڈل اریبہ قتل کیس ملزمہ طوبیٰ کے تحریری بیان کے بعد نیا رخ اختیار کر گئی ہے جبکہ ملزمہ طوبیٰ نے قتل کرنے کا اعتراف بھی کر لیا ہے۔ملزمہ طوبیٰ نے پولیس کو تحریری بیان میں بتایا ہے کہ اسے پاﺅڈر کی شکل میں زہر حکیم ذیشان حیدر نے 20 ہزار روپے کے عوض دیا تھا جبکہ مقتولہ اریبہ فیصل آباد میں شو کر کے آئی تھی جس کے بعد وہ ملزمہ کے گھر ہی سو گئی۔طوبیٰ نے بتایا کہ اس نے شام کے وقت مقتولہ کو جوس میں زہر ملا کر دیا جبکہ 4 گھونٹ پینے کے بعد اریبہ قے کرنے لگی اور باتھروم کی طرف بھاگی۔طوبیٰ نے اعتراف کیا ہے کہ اس نے اریبہ کو بھاگتے ہوئے پکڑ کر اس کے منہ پر ہاتھ رکھ لیا تاکہ زہر اس کے منہ سے باہر نہ آ جائے جبکہ اس عمل کے چند منٹ بعد اریبہ کی موت ہو گئی۔

آئی جی پنجاب کی تبدیلی کا فیصلہ، مشتاق سکھیرا کی ڈی جی ایف آئی اے تعیناتی کا امکان

ملزمہ طوبیٰ نے بتایا کہ قتل کرنے کے بعد اس نے ایک اور ساتھی فاروق کو فون کر کے بتایا جبکہ اس کے ساتھ مل کر ہی لاش کو ٹھکانے لگانے کا پلان بنایا۔اس نے تحریری بیان میں بتایا کہ وہ لاش کو نہر میں پھینکنے جا رہی تھی جبکہ پھر بس اڈے چلی گئی ۔وہ اریبہ کی لاش کو اس کے گھر پہنچانا چاہتی تھی۔اس سے قبل ملزمہ نے نجی ٹی وی کے کیمرہ مین یوسف کو بھی زہر دے کر قتل کرنے کا اعتراف کیا ہے جبکہ اس کا کہنا تھا کہ انہوں نے اس کے سابق شوہر کے ساتھ مل کر اس کی بیٹی کا قتل کیا تھا جس کے بدلہ کے طور پر اس نے یہ انتہائی اقدام کیا۔

مزید :

لاہور -