کارگل جنگ میں پہلا راکٹ میں نے چلایا؛ حافظ سعید

کارگل جنگ میں پہلا راکٹ میں نے چلایا؛ حافظ سعید

  

 لاہور (خبر نگار خصوصی) جماعت الدعوۃ کے امیر حافظ محمد سعید نے انکشاف کیا ہے کہ کارگل کی جنگ میں بھارت کے زیر قبضہ چوٹیوں پر سب سے پہلا راکٹ انہوں نے چلایا تھا اور وہ پہلی بار یہ بات منظر عام پر لا رہے ہیں۔ایک مقامی ہوٹل میں سینئر کالم نگار اسد اللہ غالب کے کالموں کے مجموعے’’اے وطن کے سجیلے جوانو!‘‘کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہ وہ بھارت کو اپنا دشمن سمجھتے ہیں اور کشمیر کو آزاد کرائے بغیر پاکستانی قوم چین سے نہیں بیٹھے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ جنرل راحیل شریف اور وزیراعظم نواز شریف دونوں شریف ہے اور ایک ہو کر قومی بقاء کی جنگ لڑ رہے ہیں ،ان کا ایک ہونا کامیابی کی ضمانت ہے۔ حافظ محمد سعید نے کہا کہ اسد اللہ غالب صحافت کے جرنیل ہیں ان کی کتاب الفاظ کی طغیانی نہیں بلکہ قوم کیلئے ایک پیغام ہے۔پاکستانی فوج نے ہمیشہ جنگ لڑی ہے اس پر تنقید ایک خوفناک سازش ہے۔افغانستان کے خلا ف امریکہ کو اڈے پاکستان میں دیئے گئے اور انخلاء کے وقت وہ بھارت کو افغانستان میں داخل کر رہا ہے۔امریکہ پاکستانی فوج کیوجہ سے پریشان ہے اور شکست خوردہ ہو کر افغانستان سے واپس گیا ہے جس کا ذکر کولن پاول نے بھی کیا ہے کہ امریکہ کی افغانستان میں شکست کی ذمہ دار پاکستانی فوج ہے ،روس بھی چاہتا تھا کہ پاکستان میں داخل ہو کر 58مسلم ممالک پر قبضہ کرے۔پاکستانی جرنیل جس ملک میں بھی جاتے ہیں ان کا فاتح کی حیثیت سے استقبال ہوتا ہے۔1948میں نہرو اقوام متحدہ میں نہ جاتا تو آج کشمیر آزاد ہوتا ۔سول اور فوجی قیادت کے ایک صفحہ پر نہ ہونے کیوجہ سے کارگل کے محاذ پر ناکامی ہوئی۔کارگل کے محاذ پر جب بھارتی فوجی اسلحے کا گودام تباہ ہوا تو وہ راکٹ میں نے اپنے ہاتھوں سے چلایا تھا ۔ بھارت پاکستان کا دشمن ہے ،نواز شریف اور راحیل شریف کے جذبے مضبوط ہونے چاہیے ۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے روزنامہ ’’پاکستان‘‘ کے چیف ایڈیٹراور تجزیہ نگار مجیب الرحمٰن شامی نے کہا کہ اسداللہ غالب کی محبتیں تبدیل ہوتی رہتی ہوں گی لیکن فوج کے حوالے سے ان کی محبت تبدیل نہیں ہوئی اور فوج سے محبت کسی شخص سے نہیں بلکہ پاکستان سے محبت ہے کیونکہ فوج اور پاکستان ایک دوسر ے کیلئے لازم و ملزوم ہیں۔جس ملک کی فوج کمزور ہوگی وہاں دشمن مضبوط ہو گا اور پاکستان کے نوجوانوں نے خون دیکر ملک کی حفاظت کی ہے۔ دہشتگردی فرقے ،مذ ہب یا صوبے کسی حوالے سے بھی ہو اسکی مذمت کر نی چاہیے کیونکہ پاکستان تمام مسلمانوں کیلئے بنا ہے۔جو لوگ پاکستانی قوم کو فرقوں میں تقسیم کر رہے ہیں وہ پاکستان کے اتنے ہی دشمن ہیں جتنے کہ بیرونی دشمن ہیں،شیعہ سنی پاکستان کے شہری ہیں ،فرقے ہمیشہ سے آرہے ہیں لیکن کسی سے جینے کا حق نہیں چھیننا چاہیے۔دنیا میں کوئی قوم ایسی نہیں جو سیاست اور معیشت کے بغیر مضبوط ہو ۔1971ء میں فوج اور سیاست کے درمیان فاصلے کے نتائج ہم نے دیکھ لئے۔پاکستانی قوم کو کسی ایک کی بجائے دونوں کی حمایت کرنی چاہیے۔ مسلم لیگ(ض )کے سربراہ اعجاز الحق نے کہا کہ پاکستان میں دہشتگردی کون کرار ہا ہے سب کو پتا ہے لیکن قیادت میں جرات نہیں ۔صرف سعودی عرب اور امریکہ کے کان میں بات کرنے کی بجائے معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھانا چاہیے۔ضرب عضب اس وقت شرو ع کر دینا چاہیے تھا جبکہ جی ایچ کیو پر حملہ ہوا ۔قوم کا ایک صفحے پر ہونا خوش آئند ہے .ریاست کیخلاف اسلحہ اٹھانے والے تمام لوگ دہشتگرد ہیں۔ سابق گورنر پنجاب اور ریٹائرڈ لیفٹنٹ جنرل خالد مقبول نے کہا کہ نریند مودی کے وزیر اعظم بننے کے بعد واضح ہو گیا ہے بھارت کے ساتھ معاملات بات چیت سے نہیں طاقت سے حل کرنے پڑیں گے۔پاکستان کی سالمیت کیلئے سب سے بڑا خطرہ اندرونی دہشتگردی ہے ۔عظیم مذہب کا چہر ہ مسخ کرنے کیلئے ملک کے اندر آگ بھڑکائی جا رہی ہے۔جنگ جیتنے کیلئے فوج کیساتھ عوامی تعاون ضروری ہے۔دنیا جان چکی ہے کہ مسائل کے باوجود پاکستان مضبوط ملک ہے۔سابق گورنر پنجاب چودھری محمد سرور نے کہا کہ ملک اور قوم کیلئے سب سے بڑ اچیلنج دہشتگردی ہے اور پوری قوم متفق ہے کہ دہشتگردی کا خاتمہ ہونا چاہیے۔پشاور حملے میں ظلم کی تاریخ کے ساتھ بہادری کی تاریخ بھی رقم کی گئی ہے کہ کس طرح اساتذہ نے اپنی جانیں دے کر بچوں کی جانیں بچائیں۔افغانستان میں جنگ کا خمیازہ پاکستانی قوم بھگت رہی ہے ۔ملک میں عدل و انصاف کا نظام کمزور ہونے کیوجہ سے ملک بد سے بد تر ہو رہا ہے۔جنرل (ر)غلام مصطفیٰ نے کہا کہ اسد اللہ غالب کی کتاب حب الوطنی کے جذبے سے بھر پور ہے ،کتاب میں مسائل کی نشاندہی کی گئی ہے قومیں صرف تجارت سے نہیں قربانیوں سے بنتی ہیں۔روز نامہ خبریں کے چیف ایڈیٹر ضیاء شاہد نے کہا کہ پاکستان میں جتنے ہیروز ہماری فوج نے پیدا کیے ہیں کسی ادارے نے نہیں کیے۔اسد اللہ غالب نے اپنی کتاب میں فوج کے بارے میں اپنے خیالات قلمبند کیے ہیں۔واپڈا کی مزدور یونین کے لیڈر خورشید احمد نے کہا کہ فوج دہشتگردوں کے خلاف جنگ لڑ رہی ہے اور جیت پاکستان کا مقدر ہے۔

مزید :

صفحہ اول -