اسرائیلی زندانوں میں قید 22 فلسطینی کینسر کے مرض میں مبتلا

اسرائیلی زندانوں میں قید 22 فلسطینی کینسر کے مرض میں مبتلا

رام اللہ (این این آئی) فلسطین میں انسانی حقوق کی تنظیموں نے اپنی رپورٹس میں بتایا ہے کہ اسرائیلی جیلوں میں قید 22 فلسطینی سرطان جیسے جان لیوا مرض میں مبتلا ہیں۔ ان میں سے بعض قیدی پچھلے 15 سال سے زندانوں میں بند ہیں مگر آج تک ایک بار بھی ان کے علاج کیلئے معائنہ نہیں کرایا گیا۔ مرکز اسیران اسٹڈی سینٹر کی رپورٹ کے مطابق اسرائیل جیل انتظامیہ کینسر میں مبتلا فلسطینی قیدیوں کے حوالے سے دانستہ لاپرواہی کا مرتکب ہورہی ہے۔ انسانی حقوق کے مندوب ریاض الاشقر کا کہنا ہے کہ کینسر کے مرض کا شکار فلسطینی قیدیوں کی زندگیوں کو شدید خطرات لاحق ہیں۔ صہیونی جیلر قیدیوں کے حوالے سے دانستہ لاپرواہی کا مظاہرہ کررہے ہیں۔

یہ تمام قیدی صرف زندہ ہیں ورنہ ان کی حالت نہایت تشویشناک ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیلی جیلوں میں دانستہ لاپرواہی سے اب تک کئی فلسطینی سسک سسک کر موت سے ہمکنار ہوچکے ہیں۔ ان میں میسرہ ابو حمدہ شہید کا نام بھی شامل ہے جو کئی سال تک سرطان میں مبتلا رہنے کے بعد اسرائیلی جیل میں دم توڑ گئے تھے۔

مزید : عالمی منظر