خزانہ کو نقصان پہنچانے کا الزام، داتا ٹاؤن کے دس ملازمین کی درخواست ضمانتیں دائر

خزانہ کو نقصان پہنچانے کا الزام، داتا ٹاؤن کے دس ملازمین کی درخواست ضمانتیں ...

لاہور(نامہ نگار)داتا گنج بخش ٹاؤن میں بغیر نقشے کے پلازے اور بلڈنگ تعمیر کرا کر گورنمنٹ کو کروڑوں روپے کا مبینہ نقصان پہنچانے کے کیس میں داتا گنج بخش کے 20 میں سے 10ملازمین نے اپنی درخواست ضمانتیں دائر کردیں۔عدالت نے 60،60ہزار روپے کے مچلکوں کے عوض10ملزمان کی ضمانتیں منظور کرلی ہیں ، اینٹی کرپشن عدالت نے مقدمے کا ریکارڈ طلب کرتے ہوئے کیس کی مزیدسماعت 10مارچ تک ملتوی کردی۔

۔سپیشل جج اینٹی کرپشن کی عدالت میں داتا گنج بخش ٹاون کے علاقوں میں بغیر نقشے کے پلازے اور بلڈنگ تعمیر کراکر گورنمنٹ کو کروڑوں روپے کا نقصان پنچانے کے الزام میں ملوث 10ملزمان طاہرعلی، تحسین حیدر، قمراسلام، شبیر حسین ،محمد احسان،انسپکٹر بلڈنگ طاہرحفیظ،محمد منشا،فیصل شہزاد محمد خان پرائیویٹ محمد زبیر اور رانا شاہ نواز نے اپنی درخواست ضمانت دائر کی ،جوعدالت نے منظور کرتے ہوئے 60،60ہزار روپے کے ضمانت نامے داخل کرانے کا حکم جاری کیا ۔

عدالت نے ملزمان کو حکم دیا کہ وہ تفتیشی آفیسر کے پاس پیش ہوں۔جعل سازی کا مقدمہ میاں طارق نامی شہری کی درخواست پر داتا گنج بخش ٹاون کے ٹی ایم او زبیروٹو ،محمد اکمل، فیصل شہزاد،ٹی او تحسین حیدر سمیت 20ملازمین کے خلاف مقدمہ درج کررکھا ہے ،ملازمین پر مبینہ طور پر الزام ہے کہ انہوں نے انارکلی، پرانی انارکلی اور دیگر داتا گنج بخش ٹاون کی حدود میں بغیر نقشے کے پلازے اور بلڈنگ تعمیر کرائے جس سے گورنمنٹ کو کروڑوں روپے کا نقصان ہوا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4