ممتاز قادری کی پھانسی کیخلاف احتجاج،راستے بند ،شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا

ممتاز قادری کی پھانسی کیخلاف احتجاج،راستے بند ،شہریوں کو شدید مشکلات کا ...

لاہور،اسلام آباد،کراچی،پشاور( نمائندہ خصوصی ،خصوصی رپورٹ) ممتا ز قادری کی پھانسی کیخلاف مذہبی وسیاسی جماعتوں نے احتجاج کرتے ہوئے مختلف شہروں میں سڑکیں بلاک کردیں اور نجی وسرکاری املاک کی توڑ پھوڑ کرتے ہوئے نقصان پہنچایا جس سے شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا۔تفصیلات کے مطابق ممتا ز قادری کی پھانسی کیخلاف جماعت اسلامی ،سنی اتحاد کونسل پاکستان ،پا کستان سنی تحریک ،جماعت اہلسنت ،جماعۃالدعوۃ ،جمعیت علماء اسلام اور تحریک رہائی غازی ممتاز حسین قادری کے زیر اہتمام مختلف شہروں میں احتجاج کیا گیا۔ لاہور کے داخلی و خارجی راستوں پر مذہبی تنظیموں کی جانب سے دھرنے دیئے گئے ۔ احتجاج کے باعث میٹرو بس سروس معطل کر دی گئی جبکہ شہر میں دفعہ 144 نافذ کر کے جلسے اور جلوسوں کے انعقاد پر پابندی لگا دی گئی ۔ مظاہرین نے راولپنڈی کو دارالحکومت اسلام آباد سے ملانے والی بڑی شاہرہ اسلام آباد ایکسپریس وے اور فیض آباد پل کے علاوہ بارہ کہو اور روات سے شہر میں آنے والے راستے بلاک کر دئیے اور گاڑیوں پر پتھراؤ کیا ۔ فیض آباد کے قریب مظاہرین نے میڈیا کے نمائندوں کو بھی تشدد کا نشانہ بنایا ۔ سنی تحریک کاکہنا ہے کہ ممتاز قادری کی نمازِ جنازہ (آج)منگل کی دوپہر راولپنڈی کے لیاقت باغ میں ادا کی جائے گی۔اسلام آباد میں وکلا کی تنظیم اسلام آباد بار کونسل نے بھی پھانسی کے خلاف ہڑتال کی اور عدالتوں کابائیکاٹ کیا۔کراچی کے چند علاقوں میں بھی احتجاج کے باعث ٹریفک کی روانی متاثر ہوئی۔ حیدر آباد ،بدین ،مظفر آباد میں بھی احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔دوسری طرف ممتازقادری کی پھانسی کے باعث ممکنہ احتجاجی مظاہروں کے پیش نظرراولپنڈی اوراسلام آباد سمیت ملک بھرمیں اہم مقامات پرسکیورٹی سخت کردی گئی ۔ اڈیالہ جیل جانے والے راستے کو سیل کر دیا گیا تھا ۔ اسلام آباد میں میٹرو بس سروس بند کرنے کے علاوہ ریڈ زون کو سیل کر دیا گیا اور پولیس اور رینجرز کے جوانوں کی بڑی تعداد وہاں تعینات کردی گئی۔ جماعت اسلامی لاہور کے زیر اہتمام وحدت روڈ لاہور پر احتجاجی مظاہرہ جبکہ منصورہ میں امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمد کی قیات میں دینی وسیاسی جماعتوں کا اہم اجلاس ہوا۔جلاس سے خطاب کرتے ہوئے میاں مقصود احمدنے کہاکہ ممتاز قادری کی پھانسی کے خلاف جمعتہ المبارک 4مارچ کو تمام دینی وسیاسی جماعتیں پنجاب بھر میں یوم احتجاج منائیں گی۔سنی اتحاد کونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے غازی ممتاز حسین قادری کو پھانسی دینے کی شدید مذمت کرتے ہوئے احتجاجی تحریک چلانے کا اعلان کردیا ہے۔چیئرمین سنی اتحاد کونسل نے آج یکم مارچ کو ہڑتال کی کال دے دی ہے اور کہاکہ پھانسی کے خلاف 3روزہ سوگ منائے گی اور اہلسنّت کے تمام مدارس بند رہیں گے۔ سربراہ پا کستان سنی تحریک محمد ثروت اعجاز قادری نے غازی ممتاز حسین قادری کو پھانسی دینے کی شدید مذمت کر تے ہو ئے کہا ہے کہ ملکی تاریخ کا سیا ہ ترین دن ہے ۔غازی ممتازقادری کی پھانسی ملکی امن ومان تباہ کرنیکی انتہائی گہری سازش ہے ۔تحریک رہائی غازی ممتاز حسین قادری کے زیرا ہتمام غازی ممتاز قادری کی پھانسی کے خلاف رات4بجے سے شاہدرہ چوک میں دھرنا دیاگیا ۔جو کہ ممتاز قادری کی پھانسی کے بعد دن 2بجے اسلام آباد کی طرف مارچ کی شکل اختیار کر گیا۔مارچ کے شرکاء آج دوپہر2بجے لیاقت باغ روالپنڈی میں ممتاز قادری کی نمازجنازہ میں شرکت کریں گے۔غازی ممتاز حسین قادری کی پھانسی کے خلاف عالمی جماعت اہلسنت نے ملک گیر تین روزہ سوگ کا اعلان کر دیا۔ امیر جماعۃالدعوۃ پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید نے ممتاز قادری کی پھانسی کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ وطن عزیز پاکستان اس وقت پہلے ہی سخت مشکلات سے دوچار ہے اور بیرونی قوتیں اسے عدم استحکام سے دوچار کرنے کی منظم سازشیں کر رہی ہیں۔ ان حالات میں حکومت کی طرف سے ممتاز قادری کو پھانسی دیکرملک میں ایک نیا مسئلہ کھڑا کر دیا گیا ہے۔ حکومت کی طرف سے مسئلہ کی حساسیت کو پیش نظر رکھنے کی بجائے جس طرح بغیر سوچے سمجھے انداز میں ممتاز قادری کو پھانسی دی گئی ہے اسے کسی صورت درست قرار نہیں دیا جاسکتا۔جمعیت علماء اسلام کے مر کز ی امیر مو لا نا فضل الرحمن نے ممتاز قادری کی پھانسی پر سخت ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے پھانسی کے اقدام کی شدید مذمت کی اور کہا کہ حیرانگی اس بات پر ہے کہ قتل کے ہزاروں مقدمات زیر بحث ہیں لیکن ممتاز قادری کے کیس میں تیزی دکھا ئی گئی ہے ۔ ممتاز قادری کی پھانسی کے خلاف تورڈھیرمیں پیر کے روزاچانک زبردست احتجاجی مظاہرہ ہواجس میں دیکھتے ہی دیکھتے سینکڑوں افراد نے شرکت کی احتجاجی مظاہرہ سے ڈسٹرکٹ کونسل کے ممبر مفتی چاند بادشاہ، مولانا صالح جان، عبدالفتاح استاد، پی ٹی آئی کے رہنماڈاکٹر فضل الٰہی اور دیگر نے خطاب کیا ۔چارسدہ کے علمائے کرام نے کہا ہے کہ ممتاز قادری کو پھانسی کی سزا سنانے والا جج اور صدرمملکت دائرہ اسلام سے خارج ہو چکے ہیں۔پھانسی کے خلاف مردان میں کالج چوک سمیت جگہ جگہ زبردست احتجاجی مظاہرے کئے گئے ۔تحصیل کونسل مردان کے اپوزیشن لیڈر اور مذہبی شخصیت ملک آیاز، جماعت اہلسنت کے صدر قاری عبدالہادی، مولانا شاہ روم نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ممتاز قادری کو پھانسی امریکہ، اسرائیل اور انڈیا کو خوش کرنے کے لئے دی گئی۔

مزید : کراچی صفحہ اول