بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان انتہا پسند ہندووں کے سامنے جھک گئے

بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان انتہا پسند ہندووں کے سامنے جھک گئے
 بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان انتہا پسند ہندووں کے سامنے جھک گئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ممبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان نے  انتہا پسند ہندووں کے سامنے سر جکا دیا ہے  اور  کہا  ہے کہ خاموش رہنا بھی اظہار رائے کی آزادی کا نام ہے اس لیے آئندہ چپ ہی رہوں گا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق شاہ رخ خان نے اپنی نئی آنے والی فلم ’’فین‘‘ کے ٹریلر کی لانچنگ کے موقع پر کہا کہ چپ رہنا بھی آزادی اظہار رائے ہے اس لیے آئندہ چپ رہنے کا سوچ لیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لوگ اپنے اپنے انداز میں آزادی اظہار رائے پر اپنے خیالات پیش کرتے ہیں لیکن میرے خیال میں اس کا ایک مطلب خاموش رہنے کا حق بھی ہے۔واضح رہے کہ شاہ رخ خان نے بھارت میں بڑھتی ہوئی عدم برداشت پر عامر خان کے بیان کی حمایت کی تھی جس پر انہیں ہندو انتہا پسند تنظیموں اور بعض حکومتی وزرا کی جانب سے بھی شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا جب کہ اس دوران ہندو انتہا پسندوں نے شاہ رخ خان سے بھارت چھوڑنے کا مطالبہ بھی کیا تھا۔

مزید : تفریح