مزدوروں کا عالمی دن: خادم اعلیٰ پنجاب ،وزیراعظم پر بازی لے گئے، کم از کم ماہانہ اُجرت آٹھ کے مقابلے نو ہزار مقرر

مزدوروں کا عالمی دن: خادم اعلیٰ پنجاب ،وزیراعظم پر بازی لے گئے، کم از کم ...
مزدوروں کا عالمی دن: خادم اعلیٰ پنجاب ،وزیراعظم پر بازی لے گئے، کم از کم ماہانہ اُجرت آٹھ کے مقابلے نو ہزار مقرر

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے مزدوروں کے عالمی دن کے موقع پر کنونشن سنٹر اسلام آباد میں لیبر کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کم از کم ماہانہ اجرت آٹھ ہزار روپے کرنے کا اعلان کیا ہے تو وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے پنجاب میں محنت کش کی کم از کم اُجرت سات سے بڑھا کر نو ہزار کرنے کا اعلان کر دیا۔دوسری جانب لاہور میں مزدوروں کو فلیٹوں کی چابیاں تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے قائد میاں نواز شریف نے مزدور تنظیموں کے ایک تولہ سونا کے برابر اُجرت کے مطالبے کے مقابلے میں کم ازکم اُجرت بیس ہزار ہونے کی خواہش کا اظہار بھی کیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے مزدوروں کے عالمی دن کے موقع پر اپنے خطاب میں کم از کم ماہانہ اجرت آٹھ ہزار روپے کرنے اور پنشن میں بیس فیصد اضافے کے ساتھ ساتھ ای او بی آئی پنشن پندرہ سو سے بڑھا کر دو ہزار روپے ماہانہ ، مزدوروں کی بیٹیوں کیلئے جہیز فنڈ ستر ہزار روپے سے بڑھا کر ایک لاکھ روپے، صنعتی تعلقات کمیشن کے قیام، پی ٹی سی ایل، سی ڈی اے اور ایچ ای سی ملازمین کو مستقل، مزدوروں کیلئے سات سکول اور چار انڈسٹریل ہوم بنانے کا اعلان بھی کیا۔ اُنہوں نے کہا کہ قوانین کا اطلاق صرف پانچ مزدور رکھنے والے اداروں پر بھی ہو گا۔ اُنہوں نے دعویٰ کیا کہ استعماری طبقے نے محنت کشوں اور مزدوروں کا استحصال کیا لیکن پیپلز پارٹی کی حکومت نے مزدوروں سے کئے گئے تمام وعدے پورے کئے۔ وزیر اعظم گیلانی نے کہا کہ آج کا دن شکاگو کے محنت کشوں کی یاد میں منایا جاتا ہے، تمام تر مظالم کے باوجود محنت کشوں کو دبایا نہیں جا سکتا۔ اُنہوں نے کہا کہ مزدوروں میں سو ارب روپے کے حصص مفت تقسیم کرنے کے ساتھ ساتھ عارضی ملازمین کو مستقل کرنے اور ٹریڈ یونین کی بحالی جمہوریت اُنہیںحکومت کا اہم کارنامہ ہے۔ اُن کا کہنا تھا کہ کچھ لوگوں کو پیپلز پارٹی کی مزدور دوستی پسند نہیں۔ وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ نئی لیبر پالیسی کا جلد اعلان کیا جائے ۔ تقریب سے خطاب کے دوران اُن کا کہنا تھا کہ بستی بسانا کھیل نہیں۔۔۔ بستے بستے بستی ہے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے پنجاب میں محنت کش کی اجرت سات سے بڑھا کر نو ہزار کرنے کا اعلان کردیا ہے۔ اُنہوں نے یہ بھی اعلان کیا کہ اقتدار میں آکر تین سال میں لوڈ شیڈنگ ختم کردیں گے۔

مسلم لیگ ن کے قائد میاں محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ عوام کو روٹی ،کپڑا اور مکان نہیں ملتا یہ صرف ووٹ حاصل کرنے کے لیے نعرے لگائے جاتے ہیں۔لاہور میں مزدوروں کو فلیٹوں کی چابیاں تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے اُنہوں نے کہا کہ مزدور کی اجرت نو نہیں بلکہ بیس ہزار ہونی چاہئے ۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز منظور تنظیموں نے ایک کنونشن میں مزدور کی تنخواہ ایک تولہ سونا کے برابر کرنے کا مطالبہ کیا تھا ۔

مزید : سیاست /Headlines