عام انتخابات میں ہندو قوم پرست جماعت کےلئے کام کرنے پر ایک درجن سے زائد افراد نے ریپ کا نشانہ بنایا ¾مسلم خاتون کا دعویٰ

عام انتخابات میں ہندو قوم پرست جماعت کےلئے کام کرنے پر ایک درجن سے زائد ...

پٹنہ(این این آئی) مشرقی بھارت میں ایک مسلم خاتون نے دعویٰ کیا ہے کہ عام انتخابات میں ہندو قوم پرست جماعت کے لیے کام کرنے پر ایک درجن سے زائد افراد نے ریپ کا نشانہ بنایا۔جھارکھنڈ میں رہنے والی اس خاتون نے پولیس کو شکایت درج کروائی ہے جس کے مطابق ملزمان نے اس کے گھر پر حملہ کیا اور اس کی 13 سال کی بیٹی پر بھی تشدد کیا۔مبینہ طور پر اس کے شوہر کو واقعے کے وقت رسیوں سے باندھ دیا گیا تھا۔

سینئر پولیس افسر اور ترجمان جھارکنڈ پولیس انوراگ گپتہ نے اس حوالے سے تحقیقات کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ یہ کہنا مشکل ہے کہ حملے کے پیچھے سیاسی مقاصد کیا تھے۔گپتہ نے بتایا تحقیقات ہر زاویے سے جاری ہے اور اس وقت یہ کہنا کافی مشکل ہے کہ حملے کی کیا وجوہات تھیں۔

مزید : عالمی منظر